ہیلتھ کیئر کمیشن کی ٹیموں کی چھاپے، 263عطائیوں کے اڈے سیل

  ہیلتھ کیئر کمیشن کی ٹیموں کی چھاپے، 263عطائیوں کے اڈے سیل

  

            لاہور (جنرل رپورٹر) پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن کی انسدادِ اتائیت کے لیے گزشتہ ماہ کے دوران 11اضلاع میں بھرپور کارروائیاں، 1473مراکز پر چھاپے مار کر263اتائیوں کی دکانیں بند کر دی گئیں۔سب سے بڑا کریک ڈاؤن لاہور میں کیا گیا،جہاں پر کمیشن کی انفورسمنٹ ٹیموں نے 604 مراکزپر ریڈز کر کے 122اتائیوں کے کاروبار بند کر دیے۔ دوسری بڑی کارروائی ضلع ملتان میں کی گئی،جہاں 231علاجگاہوں پر چھاپے مارے گئے اور 45اتائیوں کے اڈے سربمہر کیے گئے۔ راولپنڈی میں 205مراکز پرریڈزکر کے 28اتائیت کی دکانیں سیل کی گئیں۔دوسری جانب قصور میں 19،مظفر گڑھ9،بہاولنگر8،ننکانہ صاحب اور سرگودھا ہرایک میں 7، چکوال،شیخوپورہ اور جہلم ہر ایک میں پانچ اتائیوں کے کاروباربھی سربمہرکر دیے گئے ہیں۔مجموعی طور پر گزشتہ ایک ماہ میں کمیشن کی ٹیموں نے جن مراکز پر چھاپے مارے گئے۔ان میں سے ڈیٹا کے مطابق 367غیر مستند افراد نے اپنے کاروبار ترک کر دیے جبکہ 78مراکز پر مستند معالجین نے علاج معالجہ کی سہولیات فراہم کر نا شروع کر دی ہیں۔دوسر ی جانب 752مراکز کی نگرانی بھی کی جائیگی جہا ں چھاپوں کے وقت مستند معالجین مو جود تھے۔واضح رہے کہ کمیشن کی ٹیموں نے اب تک ایک لاکھ35ہزار سے زائد مراکز پر چھاپے مار کر 38ہزار 490عطائیوں کے کاروبار سیل کیے ہیں۔

 جبکہ تقریباً32ہزار اتائی اپنا غیر قانونی کاروبار ترک کر چکے ہیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -