برطانیہ بد ترین معاشی  بحران کا شکار، گھریلو گیس اور بجلی بلوں میں 40فیصد اضافہ 

برطانیہ بد ترین معاشی  بحران کا شکار، گھریلو گیس اور بجلی بلوں میں 40فیصد ...

  

      لندن(آئی ا ین پی) برطانیہ میں گھریلوں گیس اور بجلی کے بلوں میں 40 فیصد تک اضافہ ہوگیا، برطانوی معاشی ماہرین نے انرجی بحران سے نمٹنے کیلئے گرم پانی، ہیٹنگ سسٹم، گھر کی غیر ضروری لائٹس اور پانی کا استعمال کم سے کم کرنیکی تجویز پیش کردی۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق سرکاری و تاریخی عمارتوں کے ہیٹنگ سسٹم، گرم پانی اور لائٹس کے غیر ضروری استعمال پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔ برطانیہ میں بھی جرمنی جیسی پابندی کا طرز عمل اختیار کرنے پر غور کیا جا رہا ہے جس میں گرم پانی، موبائل ایئر کنڈیشنر اور فین ہٹر شامل ہیں۔ متوقع پابندیوں کے قوانین کے تحت گھریلو صارفین کو سال میں صرف اکتوبر سے مارچ تک ہیٹنگ سسٹم(ہٹر)کے استعمال کی اجازت دی جائیگی۔ زیر غور قانون کے تحت لندن میں بھی جرمنی کی طرز پر پانی کی بچت کے پیش نظر تمام سوئمنگ پولز، جم، میوزیم کی لائٹس، پارکس کی لائٹس اور ان میں نصب آبشاریں، فوارے، غیر ضروری بجلی سے چلنے والی اشیا ٹی وی و دیگر اشیا سب کو بند کر دیا جائے گا۔ جبکہ یہ بات بھی سامنے آرہی ہے کہ عام گھروں کے بجلی کے بل پانچ سو پاؤنڈ ماہانہ تک جاسکتے ہیں جبکہ برطانیہ میں گیس اور بجلی کے بحران کے نتیجے میں بلوں میں اضافہ برطانوی عوام کی برداشت سے باہر ہوگیا ہے۔ 

معاشی بحران 

پرویز خٹک

مزید :

علاقائی -