مسائل کے حل کیلئے مشترکہ بورڈ بنایا جائے‘ محمد فائق شاہ

مسائل کے حل کیلئے مشترکہ بورڈ بنایا جائے‘ محمد فائق شاہ

  

پشاور(سٹی رپورٹر) امن ترقی پارٹی نے ایک مشترکہ قرارداد کے ذریعے پھر مطالبہ کیا ہے کہ مسائل کے حل اور ریاست، معیشت اور معاشرت کو بچانے کیلئے بورڈ برائے حکمت و ایمانداری بنایا جائے، ایگزیکٹو کمیٹی کے اجلاس کے بعد بریفنگ دیتے ہوئے چیئرمین امن ترقی پارٹی محمد فائق شاہ نے کہا کہ پورا ملک سیلاب کے طوفان کا شکار ہے، بلوچستان سے کراچی اور خیبر سے پنجاب تک ایک ناگہانی صورتحال ہے، حکمران، اشرافیہ اور اقتدار کے پجاری دیوالیہ پن کا شکار ہیں، انہوں نے کہا کہ چاروں صوبوں، میں طوفان، گلگت بلتستان اور آزاد کشمیر میں شورش برپا ہے، ریاست، معیشت اور معاشرت طوفاں میں کشتی کی طرح ڈانواں ڈول ہے، ان مسائل سے نکلنے کے لئے تمام اداروں پر مشتمل بورڈ برائے حکمت و ایمانداری ہی واحد حل ہے جس کے ذریعے عوام کے تمام طبقات اور قومی ادارے ملک کر ملک کا نظم و نسق چلائیں، یہ اٹھنے والا عوامی طوفان کوئی روک نہیں پائے گا، زراعت، صنعت اور تجارت سب ڈوب گیا، ادارے دیوالیہ ہو رہے ہیں سب سے بڑی مشکل ملک کے دفاع پر پڑے گی، حیرت اس بات پر ہے کہ ادارے، سیاستدان اور حکمران اس کی اہمیت سے پردہ پوشی کیوں کر رہے ہیں؟ سنگینی کا احساس کیوں نہیں ہو رہا؟ انہوں نے کہا کہ امن ترقی پارٹی مکمل لائحہ عمل دے رہی ہے جہاں سیاست، جمہوریت اور معیشت کو استحکام دیا جا سکتا ہے۔ محمد فائق شاہ نے کہا کہ امن ترقی پارٹی نے اصلاحات کے ہر ایجنڈے کو سپورٹ کیا تاکہ پاکستان میں ترقی یافتہ صبح طلوع ہو، 22 کروڑ افراد خوشحال ہو سکیں مگر سیاسی جماعتوں اور اداروں کو ادراک نہیں ہو رہا، یہی بے حسی تباہی لاتی ہے، حکمران جماعتیں فوراً مشترکہ بورڈ بنانے پر توجہ دیں، برکت اور خوشحالی آئے گی اس وقت چاروں صوبوں میں بے چینی اور بے یقینی ہے، چین جیسے دوست ممالک بھی ناراض ہیں، عالمی تنہائی اور معاشی دیوالیہ کروڑوں انسانوں کو خطرہ ہے، یہ لوگ چپ نہیں بیٹھیں گے، فوری اس کا ادراک کیا جائے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -