غلط تشخیص،قصبہ گجرات میں نوجوان جاں بحق،ورثاکا احتجاج

      غلط تشخیص،قصبہ گجرات میں نوجوان جاں بحق،ورثاکا احتجاج

  

قصبہ گجرات(نمائندہ پاکستان)آر ایچ سی قصبہ گجرات کے ڈاکٹرز کی بے حسی عوام کی زندگیاں چھیننے لگی موبال فون میں مگن ڈاکٹرز کی غلط تشخیص سے نوجوان زندگی کی بازی ہار گیا تفصیل کے مطابق آر ایچ سی قصبہ گجرات میں تعینات ڈاکٹرمقداد قادر نے انسانیت اور اپنے پیشہ کے تقدس کو پامال کردیا ہسپتال آنے والے مریضوں کو بغیر چیک کیے ڈی ایچ کیو مظفر گڑھ ریفر کرنا معمول بنا لیا چند روز قبل نوجوان طالب علم کو ہارٹ اٹیک کی وجہ سے ہسپتال لایا گیا مگر موبال فون میں مگن ڈاکٹر نے ہیضہ کی دوا دے کر ٹرخادیادل کا مریض بروقت طبی امداد نہ ملنے کی وجہ سے جان کی (بقیہ نمبر37صفحہ7پر)

بازی ہار گیا اوراس طرح ڈاکٹرمقداد قادر کی غفلت نے والدین کی کمر توڑ دی اسی طرح گزشتہ شب علاقہ کی ایک قابل احترام شخصیت ڈلیوری کے سلسلہ میں مریضہ کو ہسپتال لاے لیکن ڈیڑھ گھنٹہ تک مریضہ بے یارومددگار تڑپتی رہی آخر لواحقین اپنی مدد آپ کے تحت مظفر گڑھ پرایویٹ ہسپتال گے جہاں مریضہ کو طبی امداد دی گی اور ڈلیوری کا عمل مکمل ہوایہی نہی بلکہ عام کھانسی زکام  اور بخار کے مریضوں کو بھی بنا چیک کیے انڈس ہسپتال جانے کا مشورہ دیا جاتا ہے جب نماندہ نے موبال نمبر6461990333پر ڈاکٹر موصوف سے رابطہ کیا تو انہوں نیغیر مہذب انداز میں جواب دیا کہ میری ڈیوٹی میری مرضی اورکال ختم کردی آخر ڈاکٹر کی بے حسی اور غفلت بارے03040925310پرسی او ہیلتھ اور ڈی ایچ اومظفر گڑھ کو بھی آگاہ کیا گیا جنہوں نے ڈاکٹر کے خلاف انکواری اور محکمانہ کاروای کی یقین دہانی کرای مگر کوی کارروائی عمل میں نہ لای گی جس پر ڈاکٹر کھلے عام دھمکیاں دینے لگا کہ جس نے میرے خلاف شکایت کرنی ہو مظفر گڑھ چلا جاے مجھے کوی فرق نہیں پڑتا اہل علاقہ معززین اور سول سوسائٹی نیٹورک کے ممبران چوہدری ارشد ندیم جاوید اقبال بودلہ۔چوہدری محمد جمشید۔میاں ظہیر عالم رستم سکھیرا۔چویدری جاہنزیب عرف جازب ملک بلال سمیجہ رانا عمران رفیقی و دیگر نے دپٹی کمشنر مظفرگڑھ اور کمشنر ڈیرہ غازیخان سے فوری نوٹس کا مطالبہ کیا ہے کہ انسانیت سے عاری اور غافل ڈاکٹر کو فور تبدیل کیا جائے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -