ملک میں حقیقی تبدیلی سے ہی مسائل حل ہونگے، ذیشان اختر

  ملک میں حقیقی تبدیلی سے ہی مسائل حل ہونگے، ذیشان اختر

  

بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر)نائب امیر جماعت اسلامی جنوبی (بقیہ نمبر37صفحہ6پر)

پنجاب سید ذیشان اختر نے کہا ہے کہ  پی ڈی ایم، پیپلزپارٹی اور پی ٹی آئی نااہل ثابت ہوچکیں، عوام کیلئے کچھ نہ کرنے والوں کو جوابدہ ہونا پڑے گا۔ جاگیردار اور وڈیرے قوم کو مزید دھوکا نہیں دے سکتے، نوجوان حقیقی تبدیلی چاہتے ہیں۔ تینوں بڑی جماعتیں ایک ہی سکے کے رخ ہیں، ملک پر بار بار حکمرانی کرنے والے قوم کے سامنے بری طرح ایکسپوز ہو گئے۔ اگر مشکلات ہیں تو اس بار عوام کی بجائے مراعات یافتہ طبقہ قربانی دے۔انہوں نے کہا کہ عدالتوں میں طاقتور اور کمزور کے لیے الگ الگ قانون ہے۔ اربوں کھربوں کی چوری کرنے والوں کو کوئی نہیں پوچھتا، غریب کو معمولی غلطی پر دھر لیا جاتا ہے۔ کرپشن حکومتی ایوانوں میں سرایت کر چکی،ملک میں احتساب نام کی کوئی چیز باقی نہیں رہی، تینوں بڑی جماعتوں نے مل کر نیب کو ختم کیا۔ بہتری آئی ایم ایف کے قرضوں سے نہیں گڈ گورننس سے آئے گی۔ مہنگائی سے عوام رُل گئے، حکمران جماعتیں مفادات کی جنگ میں مصروف ہیں۔ سیاسی و معاشی بحران ہر آنے والے دن کے ساتھ گھمبیر صورت حال اختیار کر رہا ہے، حالات اسی طرح رہے تو ملک کو دیوالیہ ہونے میں زیادہ دیر نہیں لگے گی۔انہوں نے مزید کہا کہ 2600ارب سالانہ کی سبسڈی کھانے والے اور پٹرول اور بجلی مفت جلانے والے محلات میں رہائش پذیر حکمران اشرافیہ غریبوں کا خون نچوڑنے پر بضد، اپنی مراعات کم کرنے پر تیار نہیں۔ معیشت میں بہتری کیلئے وی آئی پی کلچر اور غیر ترقیاتی اخراجات کا خاتمہ، آئی ایم ایف اور سودی نظام کو خیرباد کہنا ہو گا۔ 75برس گزرجانے کے بعد بھی ملک میں انگریز کا دیا گیا نظام رائج ہے۔ وقت آ گیا ہے کہ استعماری نظام اور اس کے وفاداروں کو گھر بھیج کر ملک میں اسلامی نظام نافذ کیا جائے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -