مسلم لیگ (ن) نے  سپیکر پنجاب اسمبلی کا الیکشن کالعدم قرار دیکر دوبارہ کرانے کا مطالبہ کردیا

مسلم لیگ (ن) نے  سپیکر پنجاب اسمبلی کا الیکشن کالعدم قرار دیکر دوبارہ کرانے ...
مسلم لیگ (ن) نے  سپیکر پنجاب اسمبلی کا الیکشن کالعدم قرار دیکر دوبارہ کرانے کا مطالبہ کردیا

  

لاہور( ڈیلی پاکستان آن لائن ) پاکستان مسلم لیگ (ن)  نے سپیکر پنجاب اسمبلی کا الیکشن کالعدم قرار دیتے ہوئے دوبارہ کراے کا مطالبہ کر دیا۔

لاہور میں مسلم لیگ (ن) کے رہنماؤں نے کہا کہ  وزیراعلیٰ پنجاب کےالیکشن کو3 بار ملتوی کیاگیا، سپیکرپنجاب اسمبلی کےالیکشن میں آئین کی خلاف ورزی کی گئی، بیلٹ پیپرزپرسیریل نمبردرج کرکےکھلی خلاف ورزی کی گئی،  چودھری پرویزالہٰی نےغیرقانونی بھرتیاں کیں، پرویزالہٰی نےاسمبلی سیکرٹریٹ میں 700افرادکوغیرقانونی بھرتی کیا۔

عطا تارڑ نے کہا کہ  پی ٹی آئی فارن فنڈنگ کاجواب دے، یہ لوگ ہردوسرےروزالیکشن کمیشن پرحملہ آورہوتےہیں، شہزاداکبرکہاں ہے،بلائیں ان کو،ہم مناظرہ کرنےکوتیارہیں، ہمیں کہتے تھے رسیدیں نکالو، اب تو عمران خان کو دینی ہیں، بتانا ہو گا کہ بھارت اور اسرائیل سے فنڈنگ کیوں آئیں؟، عمران خان بیرونی سازش کے بیانیے کے پیچھے نہیں چھپ سکتے ، انہیں  فارن فنڈنگ کا جواب دینا ہوگا، کوئی مذہبی ٹچ اس کا جواب نہیں۔ 

عطا تارڑ نے کہا کہ  یہ چیف الیکشن کمشنر سے بھی میچ فکس کرنا چاہتے تھے،  کہاگیا کہ اتنی سی منی لانڈرنگ کی ہے،ایک وزیر اعلیٰ کو 10ووٹ دے کر وزیر اعلیٰ انسٹال کیا گیا، بیلٹ پیپر پر سیریل نمبر درج کر کے کھلی دھاندلی کی گئی ،  خفیہ رائے شماری کی قانون میں کچھ ایکسیپشنز میں دی گئی ہیں۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -