حکومت کا ٹی وی میزبان کیلئے دوپٹہ لازم ، سکرین بھارتی اداکاروں کے اشتہارات سے پاک‘ کرنے کی پارلیمانی سفارش ماننے سے انکار

حکومت کا ٹی وی میزبان کیلئے دوپٹہ لازم ، سکرین بھارتی اداکاروں کے اشتہارات ...
حکومت کا ٹی وی میزبان کیلئے دوپٹہ لازم ، سکرین بھارتی اداکاروں کے اشتہارات سے پاک‘ کرنے کی پارلیمانی سفارش ماننے سے انکار

  

 اسلام آباد ( مانیٹرنگ ڈیسک ) حکومت نے پارلیمانی سفارش کے باوجود بھارتی اداکاروں اور اداکاراﺅں کے اشتہارات پاکستانی میڈیا پر پابندی لگانے سے انکار کردیا ہے اور تجویز پیش کی ہے کہ اس قسم کی نشریات پر پابندی ک معاملہ عدالت پر چھوڑ دیا جہاں یہ معاملہ پہلے ہی زیرالتوا ہے ۔بھاری اخبار کے مطابق قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے اطلاعات و نشریات نے بھارتی ماڈلز اور اداکاروں پر بنائے جانے والے اشتہارات پاکستانی میڈیا پر چلانے پر پابندی لگانے کی سفارش کے ساتھ ساتھ ٹی وی کی میزبانوں کے سر پر دوپٹہ لازم قراردینے کی سفارش کی ۔کمیٹی کی سفارش کے جواب میں وزیراطلاعات قمر زمان کائرہ نے یہ معاملہ عدالت میں زیرالتوا ہے اس لئے بہتر ہے کہ عدالتی فیصلے کا انتظار کیا جائے ۔انہوں نے کمیٹی کے ارکان سے اتفاق کرتے ہوئے کہا کہ مقامی تہذیب و تمدن کو فروغ دینا چاہئے جبکہ پاکستان وسیع ورثہ رکھتا ہے ۔ اخبار کے مطابق بھارتی اداکار شاہ رخ خاں ، سنیل شیٹھی، کرینہ کپور ،کترینہ کیف ،اور کاجول سمیت کئی اداکاروں پر فلمبند ہونے والے اشتہارات پاکستانی میڈیا پر چل رہے ہیں ۔قمرزمان کائرہ نے کمیٹی کو بتایا کہ پاکستان نے بھارت کو کئی فورمز اور مواقع پر آگاہ کیا ہے کہ بھارتی چینلز پاکستان میں دکھائے جا رہے ہیں لیکن بھارت کے جانب سے تاحال مثبت جواب نہیں دیا گیا اور نہ ہی اس معاملے مین پیش رفت ہوسکی ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ پاکستان ایک ذمہ دار ملک ہے اور اپنی حکمتِ عملی بھارت کے ساتھ تعلقات میں بہتری پیدا کی ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ پورا ملک اس وقت دہشت گردی کا شکار ہے اور اس مائنڈ سیٹ کا ہر کسی کو مل کر مقابلہ کرنا ہوگا ۔ان حالات میں تحمل اور برداشت کو فروغ دینا وقت کی اہم ترین ضرورت ہے ۔

مزید :

اسلام آباد -