ترکی اور روس کے خراب تعلقات سے فائدہ اٹھانے کیلئے ایک اور اسلامی ملک درمیان میں کود پڑا، روس کو بڑی پیشکش کردی

ترکی اور روس کے خراب تعلقات سے فائدہ اٹھانے کیلئے ایک اور اسلامی ملک درمیان ...
ترکی اور روس کے خراب تعلقات سے فائدہ اٹھانے کیلئے ایک اور اسلامی ملک درمیان میں کود پڑا، روس کو بڑی پیشکش کردی

  

قاہرہ(مانیٹرنگ ڈیسک) ترکی کے روس کا جنگی طیارہ گرائے جانے کے بعد روس نے اس پر اقتصادی پابندیاں لگا دی ہیں اور اس کے تجارتی سامان لے کر روس پہنچنے والے ٹرکوں کو اپنے ملک میں داخل ہونے سے روک دیا ہے۔ ترکی کے ہاتھ سے روس کی مارکیٹ نکلتے ہی مصر نے اس کی جگہ لینے کے لیے پرتولنے شروع کر دیئے ہیں۔ اس مقصد کے لیے متحدہ عرب امارات میں مصر کے وزیر صنعت و تجارت طارق کابل نے اپنے روسی ہم منصب سے ملاقات کی ہے جس میں باہمی تجارت بڑھانے پر تبادلہ خیال کیا گیا ہے۔

مزید جانئے: روس کے بعد ایک اور ملک نے ترکی پر سنگین ترین الزام لگا دیا، نیا تنازعہ کھڑا ہو گیا

مصری وزیر کا ملاقات میں کہنا تھا کہ ”ہم روسی مارکیٹ کی ضروریات کے مطابق اپنی اشیاءروس کو برآمد کرنا چاہتے ہیں، خاص طور پر ہم وہ اشیاءروس بھیجنا چاہتے ہیں جو اس سے قبل ترکی بھیج رہا تھا۔ “مصری وزیر کا کہنا تھا کہ ترکی رو س کی پھل اور سبزیوں کی کل ضرورت کا 66فیصد فراہم کر رہا تھا، اب روس کی طرف سے ترکی پر اقتصادی پابندیاں عائد کرنے سے یہ جگہ خالی ہو گئی ہے اور ہماری خواہش ہے کہ روس اب ترکی سے لیے جانے والے پھل اور سبزیاں ہم سے خریدے۔

مزید :

بین الاقوامی -