فیصل آباد، نوجوان میں ’’ایڈز‘‘ کی شناخت ہونے پر ہسپتال سے ڈسچارج

فیصل آباد، نوجوان میں ’’ایڈز‘‘ کی شناخت ہونے پر ہسپتال سے ڈسچارج

  

فیصل آباد(بیورورپورٹ)ڈی ایچ کیو ہسپتال میں شدید بیماری کی کیفیت میں لائے جانے والے 22سالہ نوجوان میں ’’ایڈز‘‘ کی شناخت ہونے پر ہسپتال انتظامیہ نے اسے فوری طور پر ڈسچارج کر دیا اور اس کے زیر استعمال رہنے والا سامان نذر آتش کر دیا۔ باخبر ذرائع کے مطابق نیب ٹاؤن کے رہائشی 22سالہ عمران ولد محمد عمران کو گذشتہ دوپہر کو شدید تکلیف کی حالت میں سول ہسپتال کے سرجیکل ایمرجنسی میں داخل کیاگیا جہاں اس کے بلڈ ٹیسٹ کروانے پر انکشاف ہوا کہ مریض ایڈز جیسی بیماری کا شکار ہے جس کا علاج معالجہ کرنے کی بجائے ڈاکٹرز نے اس کو فوری طور پر ہسپتال سے چھٹی دے دی. اور اس کو لاہور میں جا کر چیک اپ کروانے کی تلقین کی. بعدازاں ڈاکٹرز نے اس کے زیر استعمال اشیاء کو جلا کر راکھ کر دیا۔

مزید :

علاقائی -