کرپشن کو جڑ سے ختم کرنے کیلئے بے رحم احتساب کرنا ہو گا ،سراج الحق

کرپشن کو جڑ سے ختم کرنے کیلئے بے رحم احتساب کرنا ہو گا ،سراج الحق

  

لاہور( نمائندہ خصوصی)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ جب تک کڑا اور بے رحم احتساب نہیں ہوتا کرپشن کے ناسور کو پھیلنے سے نہیں روکا جاسکتا،کرپشن عام آدمی نہیں اعلیٰ عہدوں اور اقتدار کے ایوانوں میں بیٹھے خاص لوگ کرتے ہیں لہٰذابڑی بڑی گاڑیوں میں گھومنے اور محلوں میں رہنے والوں کو پکڑا جائے تو کرپشن کے سارے سراغ مل جائیں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سید مودودی انسٹی ٹیوٹ میں نئے آنے والے طلبہ کو دیے گئے استقبالیہ کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔تقریب سے نائب امیر جماعت اسلامی حافظ محمد ادریس،پرنسپل ڈاکٹر شبیر احمد منصوری اور دیگر نے بھی خطاب کیا ۔سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ حکمرانوں کی تمام تر توجہ کا مرکزایسے منصوبے ہیں جن میں دماغ کی بجائے لوہے کا استعمال زیادہ ہوتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک سے قرضے لینے والے اللہ سے نہیں صیہونی اداروں سے ڈرتے ہیں اور جب انہیں قرضے کی بھیک مل جاتی ہے تو پھولے نہیں سماتے ۔ انہوں نے کہا کہ اس سے بڑی بدقسمتی اور کیا ہوسکتی ہے کہ اپنی نوجوان نسل کو دشمن کے حوالے کردیا جائے ،استعماری قوتیں ان این جی اوز کے ذریعے ہمارے تعلیمی اداروں کو ڈانس اور فیشن کلبوں میں بدل رہی ہیں ،وہ ہمارا تابناک ماضی اور ہیروز چھین کر ، بچوں کے ذہن میں اپنے نظریات ٹھونس رہی ہیں تاکہ انہیں ذہنی غلام بنا سکیں ۔سراج الحق نے کہا کہ جب تک عوام خود اپنے اندر سے دیانت دار لوگوں کو سامنے نہیں لاتے یہ ظلم و جبر ختم نہیں ہوگا ۔قبل ازیں حافظ محمد ادریس نے کہا کہ سید مودودی انسٹی ٹیوٹ سے فارغ التحصیل ہونے والے بیس سے زائد ممالک کے طلباء اپنے ممالک میں اعلیٰ حکومتی و انتظامی عہدوں پر فائز ہیں اور اپنے اپنے ملکوں میں تحریک اسلامی اور پاکستان کے سفیر ہیں ۔ایک دوسری تقریب سے خطاب کرتے ہوئے امیر جماعت اسلا می کا کہنا تھا کہ ایک بااعتماد ،شفاف اور غیر جانبدار انتخابی نظام سے ہی اہل اور دیانتدار قیادت سامنے آسکتی ہے لہٰذاالیکشن کمیشن آف پاکستان فوری طور پر مجوزہ انتخابی اصلاحات پر عمل درآمد کو یقینی بنائے ۔انہوں نے کہا کہ صرف انہی سیاسی پارٹیوں کو انتخابات میں حصہ لینے کی اجازت ہونی چاہئے جن کے اندر الیکشن کمیشن کی نگرانی میں انتخابات باقاعدگی سے ہوتے ہوں اورجن پارٹیوں کے اپنے اندر جمہوریت نہیں وہ کس منہ سے جمہوریت کی بات کرتی ہیں ،تقریب میں جماعت اسلامی کی مرکزی شوری ٰ کے فیصلے کے مطابق پارٹی انتخابات کیلئے نائب امیر اسد اللہ بھٹو ایڈووکیٹ کی نگرانی میں الیکشن کمیشن قائم کردیا گیا ، منصورہ میں منعقدہ مرکزی و صوبائی ذمہ داران اور کارکنان کی ایک تقریب میں امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے اسد اللہ بھٹو سے ان کی نئی ذمہ داریوں کا حلف لیا جبکہ شوری ٰ نے انتخابی عذر داریوں اور شکایات کے ازالے کیلئے اسد اللہ بھٹو ایڈووکیٹ کی سربراہی میں ایک الیکشن ٹربیونل بھی تشکیل دیدیا ۔ تقریب میں نائب امراء حافظ محمد ادریس ،راشد نسیم، ڈپٹی سیکرٹری جنرل ڈاکٹر فرید احمد پراچہ ،حافظ ساجد انور اور محمد اصغر، امیر جماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمد اور امیر جماعت اسلامی لاہور ڈاکٹر ذکراللہ مجاہد نے بھی شرکت کی۔

مزید :

صفحہ آخر -