بھارتی صحافی کا کھٹمنڈو میں نواز، مودی خفیہ ملاقات کا انکشاف ، بھارتی سٹیل ٹائیکون سجن جندل کا اہم کردار

بھارتی صحافی کا کھٹمنڈو میں نواز، مودی خفیہ ملاقات کا انکشاف ، بھارتی سٹیل ...
بھارتی صحافی کا کھٹمنڈو میں نواز، مودی خفیہ ملاقات کا انکشاف ، بھارتی سٹیل ٹائیکون سجن جندل کا اہم کردار

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا بھر میں پیر کے روز پاکستانی وزیر اعظم نواز شریف سے بھارتی ہم منصب نریندر مودی کی ملاقات کے چرچے ہیں اور ہر طرف اس غیر رسمی ملاقات کو دو طرفہ تعلقات کیلئے نیک شگون قرار دیا جارہا ہے لیکن اس اچانک ہونے والی ملاقات کے حوالے سے بہت سے سوالات ذہن میں آتے ہیں اور ہرکوئی پوچھ رہا ہے کہ یہ برف آخر کیسے پگھلی ۔ پاک بھارت برف پگھلنے کے راز کا پردہ ایک بھارتی صحافی نے فاش کردیا ہے اور کہا ہے کہ دونوں رہنماو¿ں نے سارک کانفرنس کے موقع پر خفیہ ملاقات کی تھی جس میں دونوں رہنماؤں نے بین الاقوامی کانفرنسوں میں غیر رسمی مذاکرات پر اتفاق رائے کیا تھا اس کے علاوہ مودی نواز شریف کو ”سرحد پار کے دوست“ بھی کہتے ہیں۔

بھارتی صحافی برکھادت نے پاکستانی نجی ٹی وی چینل 92 نیوزکو دیے گئے انٹرویو کے دوران انکشاف کیا ہے کہ وزیر اعظم نواز شریف اور وزیر اعظم نریندر مودی نے سارک کانفرنس میں صرف ہاتھ ملایا لیکن سائیڈلائن پر خفیہ ملاقات بھی کی کانفرنس کے دوران نواز شریف اور نریندر مودی کا ہاتھ ملانا ہی بڑی بات تھی۔ انہوں نے بتایا کہ دونوں رہنماو¿ں کی خفیہ ملاقات کا انتظام بھارتی سٹیل ٹائیکون سجن جندل نے کیا ۔ سٹیل میگنٹ سجن جندل کا کردار صرف خفیہ پیغام رساں کا ہے جو بغیر پروٹوکول ملاقات کا انتظام کرتاہے۔

سارک کانفرنس کے دوران مودی نے جندل کو فون کرکے پہلی فلائٹ سے کھٹمنڈو پہنچنے کی ہدایت کی اور جندل سے مودی نے کہا کہ وہ ” سرحد پار کے دوست “ سے خفیہ رابطہ کریں۔ جس کے بعد دونوں وزرائے اعظم نے کھٹمنڈو میں جندل کے ہوٹل رو م میں ایک گھنٹہ طویل ملاقات کی۔پہلی ملاقات کے دوران نواز، مودی نے دوطرفہ تعلقات کی لگامیں اپنے ہاتھ میں لینے کا فیصلہ کیا۔ خفیہ ملاقات میں ہی مودی نے نواز شریف کو ورلڈ کپ کے حوالے سے گڈ لک کا فون کیا۔ ملاقات کے دوران نواز، مودی نے پاک بھارت بہتر تعلقات میں حائل رکاوٹوں پر بات کی اور تعلقات کیلئے مزید وقت پر اتفاق کیا۔ملاقات کے دوران مودی نے نوازشریف سے کہا کہ الیکشن سمیت چند مجبوریاں ہیں جس کی وجہ سے باضابطہ مذاکرات نہیں ہوسکتے دونوں وزرائے اعظم نے فیصلہ کیا تھا کہ بین الاقوامی کانفرنسوں میں جہاں مناسب موقع ہوا غیر رسمی ملاقات کی جائے گی۔

برکھا دت نے بتایاکہ بھارتی سٹیل انڈسٹری افغانستان سے لوہے کے کباڑکیلئے پاکستان سے اچھے تعلقات چاہتی ہے جس کی وجہ سے مودی کی حلف برداری کی تقریب کے دوران جندل نے نئی دہلی میں نواز شریف کیلئے ٹی پارٹی کا اہتمام کیا تھا جس کی میڈیا میں خوب بازگشت سنائی دی تھی۔دوسری طرف بھارتی وزارت خارجہ نے نواز، مودی ملاقات پر تبصرے سے انکار کردیا ہے۔

مزید :

قومی -اہم خبریں -