بھارتی سکول میں واش روم جانے والی 14 سالہ لڑکی ماں بن کر واپس آگئی، ناقابل یقین واقعہ، پولیس حرکت میں آگئی

بھارتی سکول میں واش روم جانے والی 14 سالہ لڑکی ماں بن کر واپس آگئی، ناقابل ...
بھارتی سکول میں واش روم جانے والی 14 سالہ لڑکی ماں بن کر واپس آگئی، ناقابل یقین واقعہ، پولیس حرکت میں آگئی

  

نیودہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی شہر حیدرآباد میں 9ویں جماعت کی 14سالہ طالبہ نے سکول کے واش روم میں بچے کو جنم دے دیا۔ بھارتی اخبار ”ہندوستان ٹائمز“ سے گفتگو کرتے ہوئے ملکاج گیری کی ڈی ای او اے اوشا رانی نے بتایا کہ طالبہ ایک سرکاری سکول میں پڑھتی تھی، کلاس میں بیٹھے ہوئے اچانک اس کے پیٹ میں درد ہوا اور وہ اپنی ٹیچر سے اجازت لے کر واش روم چلی گئی۔ کچھ ہی دیر بعد ٹیچر اور دیگر طالبات کو نوزائیدہ بچے کے رونے کی آواز آئی۔ وہ واش روم کی طرف گئیں تو لڑکی کے پاس نومولود کو دیکھ کر حیران رہ گئیں۔ انہوں نے پولیس کو بلا کر ماں اور بچے کو اس کے حوالے کر دیا۔

مزید جانئے: ’میں ماں نہیں بننا چاہتی کیونکہ۔۔۔‘ خاتون صحافی نے ایسی بات کہہ دی کہ قتل کی دھمکیاں مل گئیں، سیکیورٹی طلب

مدھاپور پولیس کے ایک انسپکٹر کے نراسیمولو کا کہنا تھا کہ ”ہم نے لڑکی کے باپ کی درخواست پر دھنو نامی ایک شخص کے خلاف جنسی زیادتی کا مقدمہ درج کر لیا ہے۔ لڑکی کا بھی کہنا ہے کہ اس شخص نے اس سے زیادتی کی تھی جس کے نتیجے میں وہ حاملہ ہو گئی۔“اس واقعے کے بعد سکول کی ٹیچرز اور طالبات میں خوف پایا جاتا ہے۔ ڈی ای او نے سکول کے ہیڈ ماسٹر ایس بساوالنگم کو معطل کر دیا ہے اور اس طالبہ کی ٹیچرز کو بھی شوکاز نوٹس جاری کر دیا ہے کہ وہ لڑکی کے حاملہ ہونے کا نوٹس کیوں نہیں لے سکیں۔ایک ٹیچر نے بھارتی نیوز چینل این ڈی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’وہ طالبہ بہت دبلی پتلی تھی اور ہمیشہ اپنے دوپٹے سے پیٹ کو چھپائے رکھتی تھی۔ کلاس میں بیٹھتے ہوئے وہ ہمیشہ اپنا بیگ اپنی گود میں رکھتی، اسی لیے ہم میں سے کسی کو بھی اس کی اس حالت کا علم نہ ہو سکا۔

لڑکی کی ایک کلاس فیلو کا کہنا تھا کہ کچھ عرصہ سے وہ بالکل الگ تھلگ رہنے لگی تھی اور ہم میں سے کسی سے بھی نہیں ملتی جلتی تھی۔ایک پولیس آفیسر کا کہنا تھا کہ متاثرہ لڑکی کا باپ ایک مزدور ہے اور وہ نواحی علاقے لمباڈا ٹانڈا میں رہتے ہیں۔ اس نے بتایا کہ لڑکی کے خاندان کو معلوم تھا کہ وہ حاملہ ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -