آرٹسٹ نے دنیا بھر سے لڑکیوں کی ایسی درجنوں ویڈیوز جمع کرلیں کہ انٹرنیٹ صارفین کو پریشان کردیا، شرمناک دعویٰ بھی کردیا

آرٹسٹ نے دنیا بھر سے لڑکیوں کی ایسی درجنوں ویڈیوز جمع کرلیں کہ انٹرنیٹ ...
آرٹسٹ نے دنیا بھر سے لڑکیوں کی ایسی درجنوں ویڈیوز جمع کرلیں کہ انٹرنیٹ صارفین کو پریشان کردیا، شرمناک دعویٰ بھی کردیا

  

پیرس (نیوز ڈیسک) فرانس سے تعلق رکھنے والی ایک نوجوان آرٹس ’ڈورا موٹوٹ‘ نے اجنبی خواتین کی ایسی ویڈیوز کا ذخیرہ جمع کرلیا ہے جن میں وہ اپنے کمپیوٹر کے سامنے بیٹھی زاروقطار روتے ہوئے دیکھی جاسکتی ہیں۔ ڈورا کا کہنا ہے کہ اکثر وہ اپنے کمپیوٹر کے سامنے بیٹھ کر روتی رہتی تھی کیونکہ وہ تنہائی محسوس کرتی تھی۔ پھر اس نے اپنی ویب سائٹ پر دیگر خواتین سے بھی درخواست کرنا شروع کردی کہ وہ اپنی ایسی ہی ویڈیوز اسے بھیجیں۔ اب تک اسے 70 سے زائد ویڈیوز موصول ہوچکی ہیں۔ ڈورا کا کہنا ہے کہ آج کل کے دور میں یہ ویڈیوز بھی فحش فلموں کی طرح ہیں، بہت سے لوگوں کو انہیں دیکھ کر جنسی تسکین ملتی ہے جبکہ کچھ لوگ ہمدردی کے اظہار کیلئے بھی اس پراجیکٹ کا حصہ ہیں۔ اس کا کہنا ہے کہ آج کل کے دور میں انٹرنیٹ پر جسمانی اعضاءکو ظاہر کرنا کسی کیلئے بھی حیران کن نہیں رہا، اب آنسو بھی فحش فلموں کی ایک شکل ہیں۔ دوسری جانب اسے افسردہ لوگوں کا غم بھی کم ہوجاتا ہے۔ عام طور پرآنسو بہانے والوں کو کمزور سمجھا جاتا ہے۔ ان خیالات کا مقابلہ کرنے کیلئے یہ پراجیکٹ شروع کیا۔ اس کا کہنا ہے کہ یہ کلپس جلد دنیا بھر کیلئے بھی انٹرنیٹ پر میسر ہوں گے۔

footage of people CRYING by dailypakistan

مزید :

ڈیلی بائیٹس -