عمران میری سیاسی سرگرمیوں سے خوش تھے، سیاست میں تیز رفتاری طلاق کا سبب نہیں ،ریحام خان

عمران میری سیاسی سرگرمیوں سے خوش تھے، سیاست میں تیز رفتاری طلاق کا سبب نہیں ...
عمران میری سیاسی سرگرمیوں سے خوش تھے، سیاست میں تیز رفتاری طلاق کا سبب نہیں ،ریحام خان

  

لندن( مانیٹرنگ ڈیسک) پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان کی سابق اہلیہ ریحام خان نے کہا ہے کہ پارٹی پر قبضہ کرنے کی باتوں میں کوئی صداقت نہیں میں ایسی باتوں کی قائل نہیں نہ پارٹی پر قبضہ کرنا چاہتی تھی۔ نیو ٹی وی کو انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ سیاست میں میری تیزرفتاری طلاق کی وجہ نہیں بنی خود عمران میری سرگرمیوں کی تعریف کرتے تھے۔ ہری پور جلسے کے بعد انہوں نے فون کرکے مجھے کہا کہ تم نے تو ساری الیکشن کمپین ہی اٹھا دی وہ بہت خوش تھے۔ اگر کسی کو اعتراض تھا تو پہلے ہی روک دیتے ۔ ریحام خان نے کہا کہ اگست میں مجھے عمران کا ایک ٹویٹ آیا جس میں مجھے سیاسی سرگرمیوں سے دور رہنے کا کہا گیا تو میں نے مزاحیہ انداز میں جواب دیا کہ کیا آپ چاہتے ہیں کہ میں گھر پر صرف روٹیاں ہی پکاوں ۔ اس کے بعد میں نے کسی سیاسی سرگرمی میں حصہ نہیں لیااور سیاسی رہنماوں کو ملنا بھی کم کر دیا ۔لوگ میرے پاس آتے تھے ان کے مسائل تھے وہ عمران سے نہیں مل سکتے تھے تو میرے پاس آتے۔ میری خواہش تھی کہ پی ٹی آئی کوئی بڑی کامیابی حاصل کرے۔انہوں نے کہا کہ عمران خان کے پہلے انٹرویو کیلئے ڈیڑھ سال انتظار کرنا پڑا ۔ جب پہلا انٹرویو کیا تو عمران خان نے کوئی ایسی بات یا اشارہ نہیں دیا کہ وہ مجھے پرپوز کرنے والے ہیں۔ ریحام خان نے کہا کہ عمران خان سے شادی کے بعد پروفیشنل کیرئیر میں مشکلات پیش آئیں۔ جب عمران خان نے مجھے پرپوز کیا تو میں نے انکار کر دیا کیونکہ وہ بہت بڑی شخصیت تھے اور ان جیسی شخصیت سے شادی بہت مشکل بات تھی لیکن انہوں نے کہا کہ تم بہت انمول ہو میں نے تم میں بہت خودادری دیکھی ہے۔ انٹرویو سے پہلے نہ میں ان کو ملی تھی نہ وہ مجھے جانتے تھے۔ کوئی بھی معقول آدمی پاکستان میں مثبت تبدیلی چاہتا ہے میں بھی اسی طرح مثبت تبدیلی چاہتی تھی لیکن افسوس کہ وہ نہیں آئی۔ تبدیلی صرف 70میں آئی اس کے بعد نہیں۔میرے انکار پر انہوں نے کہا کہ تم ڈرو نہیں۔ مجھے لگا کہ عمران بھی میچور تھے اور میں بھی میچور تھی لیکن اللہ کو منظور نہ تھاجس رشتے نے ٹوٹنا ہو وہ ٹوٹ کر ہی رہتا ہے۔ ریحام خان کا کہنا تھا کہ شادی کے بعد دوسری بیویوں کی طرح میں بھی ان کیلئے پریشان رہتی جب وہ گھر سے باہر جاتے تو میں ان کیلئے دعا کرتی کہ اللہ ان کو اپنی امان میں رکھے میرے بچے بھی ان کی سلامتی کیلئے فکر مند رہتے۔ ایک سوال کے جواب میں ریحام خان نے کہا کہ میں نے ان سے کنٹینر پر ایک انٹرویو کیا لیکن وہ مبینہ ویڈیو میری نہیں تھی میں نے شادی کے بعد ان سے پوچھا کہ کنٹینر ویڈیو کا کیا چکر ہے میری صحافیوں سے درخواست ہے کہ اگر ایسی کوئی ویڈیو ہے تو دکھائی جائے ورنہ ایسی باتیں نہ کی جائیں۔ ریحام خان نے کہا کہ میرے بھائی کو میری شادی پر بہت اعتراض تھا ماں کو ہلکا اعتراض تھا لیکن انہوں نے ہاں کر دی۔ بھائی نے کہا کہ تمہاری زندگی دس سال بعد بہت مشکل سے دوبارہ ٹھیک ہوئی ہے اب خراب نہ ہو جائے ۔لیکن میں نے شادی کرلی بعد میں ان کے تما م خدشات درست ثابت ہوئے ۔حق مہر کے سوال پر انہوں نے کہا کہ میں نے کوئی حق مہر نہیں لکھوایا مولوی صاحب نے پوچھا تو میں نے کہا کہ کوئی نہیں تو عمران نے خود ہی لکھوا دیا جو مجھے معلوم نہیں کتنا ہے۔ریحام خان نے کہا کہ یہ کیسے ہو سکتا ہے کہ کسی گھر میں لڑائیاں نہ ہوں۔ شادی کے بعد ٹی وی چینلز مجھے نوکری دینے سے کترانے لگے میں نے کبھی عمران سے خرچہ نہیں مانگا نہ ضرورت پیش آئی میں خود اپنا اور اپنے بچوں کا خرچ اٹھا سکتی تھی ۔ ریحام نے کہا کہ میری فلم کا پراجیکٹ شادی کے بعد نہیں بلکہ پہلے کا منصوبہ تھا جو شادی کی وجہ سے تاخیر کا شکار ہوا میرے دوست مجھے بڑا ذہین سمجھتے ہیں لیکن اب مجھے ڈانٹتے ہیں۔

مزید :

قومی -