متحدہ پاکستان کی قائد کے مقدمات سے لاتعلقی شرمناک ہے :واسع جلیل

متحدہ پاکستان کی قائد کے مقدمات سے لاتعلقی شرمناک ہے :واسع جلیل

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک)متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی کے ارکان واسع جلیل، ڈاکٹرندیم احسان اورمصطفےٰ عزیزآبادی نے میڈیامیں آنے والی ان خبروں کوانتہائی شرمناک قرار دیا ہے جن کے مطابق اپنے آپ کو خود ساختہ ایم کیوایم پاکستان کہنے والوں نے قائدتحریک الطاف حسین پر لندن میں چلنے والے مقدمات سے بھی خودکولاتعلق کرلیاہے اوران کی جانب سے لندن میں وکلاء سے بھی کہاگیاہے کہ اس سلسلے میں جمع کرائی گئی رقم بھی واپس کی جائے ۔ اراکین رابطہ کمیٹی نے کہاکہ پاکستان میں غریب ومتوسط طبقہ کے افراد کیلئے انتخابات میں حصہ لینا ناممکن سمجھا جاتا ہے لیکن قائد تحریک الطاف حسین نے اس ناممکن کو ممکن کردکھایا اور غریب ومتوسط طبقہ سے تعلق رکھنے والے افراد کو منتخب کراکر سینیٹ ، قومی ، صوبائی اسمبلی اور بلدیاتی ایوانوں میں بھیجا۔ پاکستان کا ہر ذی شعور شہری اس حقیقت سے اچھی طرح واقف ہے کہ ملک میں الیکشن کے موقع پر پارٹی ٹکٹوں کا نیلام گھر سجایاجاتا ہے اور پارٹی ٹکٹ کروڑو ں روپوں میں فروخت کیے جاتے ہیں جبکہ کروڑوں روپے خرچ کرنے کے باوجود کوئی سینیٹ ، قومی اورصوبائی اسمبلی کی رکنیت حاصل نہیں کرپاتالیکن قائد تحریک الطاف حسین نے ایم کیوایم کے عام کارکنوں کو فری میں نہ صرف بار بار سینیٹ ، قومی وصوبائی اسمبلی اور بلدیاتی ایوانوں میں نمائندگی دلوائی بلکہ انہیں وزیراور مشیر بھی بنایابدقسمتی سے آج وہی احسان فراموش محض اپناسرمایہ اورکاروبار بچانے کی خاطر اپنی اوقات پر اتر آئے ہیں ۔ اراکین رابطہ کمیٹی نے کہاکہ جس قائد کے نام پران گمنام لوگوں نے نام اورمقام حاصل کیا،جس کی بدولت سینیٹ اورقومی وصوبائی اسمبلی کی رکنیت حاصل کی، جس کے دم سے اقتدار کے ایوانوں میں پہنچے، ہرطرح کی سرکاری مراعات حاصل کیں،جس کے وسیلے سے مال ودولت اورآسائشیں حاصل کیں،اپنے اوراپنے خاندان کے لئے مفادات حاصل کئے آج وہ ضمیرفروش اوراحسان فراموش کسی کی ’’ وش لسٹ ‘‘ پر عمل کرتے ہوئے اپنے محسن سے نہ صرف لاتعلقی اختیارکرچکے ہیں بلکہ انہوں نے اسی محسن الطاف حسین کے خلاف لندن میں چلنے والے مقدمات سے بھی خودکولاتعلق کرلیاہے اورانہیں اس آزمائش کے وقت تنہا چھوڑکراپنے اوراپنے خاندان کے مفادات کیلئے انتہائی پستی میں گرچکے ہیں۔رابطہ کمیٹی کے ارکان نے کہاکہ ان افرادکایہ عمل نہ صرف انتہائی افسوسناک اورشرمناک ہے بلکہ انتہائی درجے کی احسان فراموشی بھی ہے جس کی مثال دیکھنے میں نہیں آتی۔ انہوں نے کہاکہ طوطاچشمی کا مظاہرہ کرنے والوں نے یہ بھی بھلادیاکہ یہ وہی قائد ہیں کہ جب ان افرادمیں سے کوئی کبھی گرفتار ہوا یااس پر کوئی بھی مشکل وقت پڑاتوقائد تحریک الطاف حسین نے انکی بھرپورقانونی مدد کی ،رات رات بھر جات کر ان کی اور ان کے اہل خانہ کی خبرگیری کی، ہر طرح سے مددومعاونت کی،اپنی اولاد کی طرح نہ صرف ان کابلکہ ان کے گھروالوں تک کاخیال کیامگر دوسروں کے لئے دن رات فکرمندرہنے والے اسی عظیم قائد الطاف حسین پر جب مشکل وقت آیا تو ان احسان فراموش افرادنے اس طرح آنکھیں پھیرلی ہیں کہ ان کے اس شرمناک عمل پر اپنے محسنوں سے آنکھیں پھیرنے والے طوطے بھی شرماگئے ہیں ۔رابطہ کمیٹی کے ارکان نے کہاکہ قائدتحریک الطاف حسین کے ساتھ بے وفائی اوراحسان فراموشی کایہ عمل دیکھ کرنہ صرف ایم کیوایم کے سچے اورباوفاکارکنوں ،ماؤں، بہنوں اوربزرگوں کے دل خون کے �آنسو رو رہے ہیں بلکہ تمام بااصول اور ظرف وضمیررکھنے والے لوگ احسان فراموشی کرنے والوں پرلعنت بھی بھیج ر ہے ہیں۔رابطہ کمیٹی کے ارکان نے کہاکہ قائدتحریک الطاف حسین کے باوفااورظرف وضمیررکھنے والے ساتھی ، احسان فراموشوں کی بے وفائی ، احسان فراشی اورطوطوچشمی کے اس شرمناک عمل کوکبھی بھی فراموش نہیں کریں گے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر