ہم چین سے بلٹ ٹرین کی بات کرتے ہیں تو وہ ہم پر ہنستے ہیں: سعد رفیق

ہم چین سے بلٹ ٹرین کی بات کرتے ہیں تو وہ ہم پر ہنستے ہیں: سعد رفیق
ہم چین سے بلٹ ٹرین کی بات کرتے ہیں تو وہ ہم پر ہنستے ہیں: سعد رفیق

  

اسلام آباد(ویب ڈیسک)وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے قومی اسمبلی میں واضح طور پر یہ کہہ دیا کہ پاکستان”بلٹ ٹرین”کے اخراجات اٹھانے کے قابل نہیں حالانہ حکمراں جماعت مسلم لیگ ن نے انتخابی مہم کے دوران عوام کو بلٹ ٹرین کا تحفہ دینے کا وعدہ کیا تھا۔

وزیرخزانہ کاسونے کی سمگلنگ اورڈالرباہرلے جانےوالوں کےخلاف کریک ڈاون کاحکم

قومی اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ”جب ہم چین سے بلٹ ٹرین کی بات کرتے ہیں تو وہ ہم پر ہنستے ہیں،ہمیں سی پیک کے تحت160کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چلنے والی ٹرین کو ہی بلٹ ٹرین سمجھنا چاہیے،ہم حقیقی بلٹ ٹرین کا خرچ برداشت نہیں کرسکتے اور یہاں اس کی مارکیٹ بھی نہیں ہے”۔انہوں نے اس بات کا اعتراف کیا کہ بلٹ ٹرین منصوبہ شروع نہ کرنے پر ان کی جماعت کو شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑا لیکن ہمارے پاس بلٹ ٹرین بنانے کے لیے پیسے ہی نہیں ہیں۔

مزید : اسلام آباد