ہیلتھ کمیشن کا کریک ڈاؤن ، عطائیوں کے 53اڈے سیل

ہیلتھ کمیشن کا کریک ڈاؤن ، عطائیوں کے 53اڈے سیل

لاہور(جنرل رپورٹر)پنجاب ہیلتھ کیئرکمیشن نے53عطائیوں کے اڈے سربمہر کر کے ان کے خلاف مزید کارروائی کا آغاز کر دیا۔تفصیلات کے مطابق صوبہ بھر میں عطائیوں کے خلاف جاری مہم کے دوران کمیشن کی ٹیموں نے راجن پور اور تحصیل جام پور میں71علاج گاہوں کا معائنہ کیا گیااور 44کو کمیشن کے ساتھ رجسٹرڈ ہونے کی وجہ سے کام کرنے کی اجازت دے دی جبکہ باقی ماندہ27کو سیل کر دیا،جن میں سے14 جی پی کلینک، 6 دندان ساز ،5میڈیکل سٹور ،1 لیب اور1 ایکسرے سنٹر شامل ہیں۔علاوہ ازیں ڈیرہ غازی خان اورتحصیل تونسہ شریف میں55علاج گاہوں کا معائنہ کیا گیااور 29علاج گاہوں کو کمیشن کے ساتھ رجسٹرڈ ہونے پر کام کرنے کی اجازت دیتے ہوئے 26عطائیوں کے اڈوں کو سیل کردیا۔جن میں 10 جی پی کلینک،5 دندان ساز،3ہومیوپیتھک،3میڈیکل سٹور، 2ایکسرے سنٹر، 1لیبارٹری ، 1حکیم اور 1میٹرنٹی ہوم تھے۔اس حوالے سے پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن کے ترجمان نے بتایاکہ یہ عطائی غیر قانونی طور پر مختلف اقسام کی طبی سہولیات مہیا کر رہے تھے،جیسے ڈسپنسر کاکلینک چلانا،مستند ڈاکٹرز کے بغیر ڈینٹل کلینک چلانا، ہومیوپیتھی علاج گاہ پر ایلو پیتھی کے ذریعے علاج، میڈیکل سٹور پر علاج ،پتھالوجسٹ کے بغیر لیب پر ٹیسٹ ،ریڈیالوجسٹ کے بغیر ایکسرے سنٹر چلانا اور بغیر ڈگری کے مطب چلانا شامل ہے ۔ انھوں نے مزید کہا کہ کمیشن پنجاب بھر میں صحت کی معیار ی سہولیات کی فراہمی کے لیے کوشاں ہے اور اب تک 6,000سے زائدعطائیت کے اڈے سیل کیے جاچکے ہیں اور 4کروڑ80لاکھ سے زائد کے جرمانے کئے گئے ہیں۔ انھوں نے اپیل کی کہ عوام عطائیوں سے علاج نہ کروائیں عطائیوں کے بارے میں اطلاع کمیشن کی مفت ہیلپ لائن 0800.00742 پر کریں۔

عطائی

مزید : میٹروپولیٹن 1