بھارت،سکول کی 88 طالبات کو اساتذہ نے سزاکے طورپربرہنہ کردیا

بھارت،سکول کی 88 طالبات کو اساتذہ نے سزاکے طورپربرہنہ کردیا

نئی دہلی (آن لائن)مغرب کی اندھادھندتقلید میں بھارت پھرآگے،سکول کی 88 طالبات کواساتذہ نے سزاکے طورپربرہنہ کردیا۔بھارتی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق بھارتی ریاست آرونچل پردیش کے ضلع پیپم پیر کے ایک سکول میں اساتذہ نے 88 طالبات کوہیڈمسٹریس اورایک طالبہ کیخلاف کاغذکے ایک ٹکڑے پر نازیبا کلمات لکھنے کے جرم میں سرعام دیگرطالبات کے سامنے زبردستی برہنہ کردیا۔یوں توآئے روزبھارت میں انسانیت سوزواقعات رونماء ہوتے رہتے ہیں جن سے تعلیمی ادارے بھی محفوظ نہیں مگرحال ہی میں پیش آنے والایہ واقعہ منفردنوعیت کاہے۔آرونچل پردیش کے ضلع پیپم پیرکی پولیس کے مطابق لڑکیوں کے سکول میں 3 زنانہ اساتذہ نے سزاکایہ گھناؤنا طریقہ اپناتے ہوئے مبینہ طور پر نازیبا کلمات کاغذکے ٹکڑے پرلکھنے کے جرم کی مرتکب جماعت ششم اورہفتم کی 88 طالبات کودیگرطلبہ کے سامنے برہنہ کردیا۔واقعے کیخلاف ایف آئی آردرج کرائی جاچکی ہے اورپولیس نے کیس ویمن پولیس سٹیشن کے حوالے کردیاہے۔

بھارت

مزید : علاقائی