ناحق مقدمہ اور قید سے نجات کا روحانی وظیفہ

ناحق مقدمہ اور قید سے نجات کا روحانی وظیفہ
ناحق مقدمہ اور قید سے نجات کا روحانی وظیفہ

  

اللہ کی ذات ہی فتاح ہے۔یہ وہ ذات ہے جس کی نظر عنایت سے ہر مصیبت،بلااور آفت دور ہو جاتی ہے۔اس کی مہربانی سے ہر مشکل آسان ہو جاتی ہے اور سختی ختم ہو جاتی ہے۔ تنگی راحت میں بدل جاتی ہے اور اس کی مدد سے دشمن پر فتح حاصل کرنے کے دروازے کھل جاتے ہیں۔غرض ایسی ذات جو ہر قسم کی تکلیف کو دور فرما کر راحت اور رحمت کے باب کھولے اسے فتاح کہتے ہیں۔

یہ عمل قید سے خلاصی کے لیے بے حد مفید ہے۔اگر کوئی شخص دشمن کی قید یا مقدمہ ناحق میں پھنس گیا ہو۔ تو اس کے لیے اس کے گھر کے افراد مل کر اس اسم پاک کو21000مرتبہ روزانہ پڑھیں7دن اس عمل کو متواتر کرنے سے قیدی رہائی پائے گا اگر گھر میں افراد کم ہوں تو ہمسائے سے بھی مدد لی جا سکتی ہے۔

۔۔۔

پیر ابو نعمان رضوی سیفی فی سبیل للہ روحانی رہ نمائی کرتے اور دینی علوم کی تدریس کرتے ہیں ۔ان سے اس ای میل پررابطہ کیا جاسکتا ہے۔peerabunauman@gmail.com

ڈیلی پاکستان کے یو ٹیوب چینل کو سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

مزید : روشن کرنیں