یہ خوبرو مسلمان لڑکی کیا کام کرتی ہے؟ وہ کام جو کسی پاکستانی لڑکی نے کبھی نہ کیا

یہ خوبرو مسلمان لڑکی کیا کام کرتی ہے؟ وہ کام جو کسی پاکستانی لڑکی نے کبھی نہ ...
یہ خوبرو مسلمان لڑکی کیا کام کرتی ہے؟ وہ کام جو کسی پاکستانی لڑکی نے کبھی نہ کیا

  

کنبرا(مانیٹرنگ ڈیسک) بہت سے پیشے ایسے ہیں جن میں خواتین کا ہونا گویا ایک اچنبھے کی بات ہوتی ہے۔ آسٹریلیا کی اس خوبرومسلمان لڑکی نے بھی ایک ایسا پیشہ اپنا رکھا ہے جو آج تک کم از کم کسی پاکستانی لڑکی نے نہیں اپنایا ہو گا۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق ایما ایروس نامی یہ لڑکی پلمبر کا کام کرتی ہے اور اب کاروبار میں اتنی ترقی کر چکی ہے کہ پلمبنگ کی ایک فرم بنا چکی ہے اور لاکھوں ڈالر کما رہی ہے۔

’اس کے جسم کا یہ حصہ اتنا بڑا کیسے ہوسکتا ہے‘ روسی حسینہ نے اپنی تصویر انٹرنیٹ پر لگائی تو طوفان آگیا

38سالہ ایما کا کاروبار سڈنی شہر میں پھیلا ہوا ہے جہاں وہ شہر بھر میں بننے والے نئے ہائی رائز اپارٹمنٹس کے پلمبنگ کے ٹھیکے لیتی ہے۔ اس کا کہنا ہے کہ وہ سالانہ کروڑوں روپے کما رہی ہے۔ میل آن لائن آسٹریلیا سے گفتگو کرتے ہوئے ایما نے بتایا کہ وہ اپنی کمائی سے خطیر رقم فلاح کے کاموں میں بھی دیتی ہے۔ اس کی والدہ اس سے رقم لے کر لبنان اور دیگر شورش زدہ علاقوں میں جاتی ہے اور وہاں پناہ گزینوں کی مدد کرتی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس