چارسدہ، آزادی مارچ پلان سی کے تحت اپوزیشن جماعتون کا احتجاج 

چارسدہ، آزادی مارچ پلان سی کے تحت اپوزیشن جماعتون کا احتجاج 

  



چارسدہ (بیو رو رپورٹ) آزادی مارچ پلان سی کے تحت چارسدہ میں اپو زیشن پارٹیوں کا تاریخی احتجاج۔ حکومت سے فوری طور پر مستعفی ہو کر نئے انتخابات کا اعلان کریں۔ پی ٹی آئی فارن فنڈنگ کیس کے حوالے سے الیکشن کمیشن سے اپنی ذمہ داریاں ہنگامی بنیادوں پر پوری کرنے کا مطالبہ۔ نارو ے میں قرآن پاک کی بے حرمتی میں ملوث ملزم کو قرار واقعی سزا دی جائے۔مقررین۔تفصیلات کے مطابق آزادی مارچ پلان سی کے تحت چارسدہ میں اپو زیشن پارٹیوں کے زیر اہتمام تاریخی احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔ مظاہرے سے خطاب کر تے ہوئے جے یوآئی کے ضلعی امیر مولانا سید گوہر شا، مفتی عبدالرؤف شاکر، پیر حزب اللہ جان، ڈاکٹر الہی جان، اے این پی کے ضلعی جنرل سیکرٹری فاروق خان شیخو،شہزاد الدین، رحم بادشاہ، پیپلز پارٹی کے بشیر پوردل، قومی وطن پارٹی مفتی افتخار،مسلم لیگ کے ضلعی صدر میاں ہمایون شاہ اور دیگر نے حکومت پر شدید تنقید کی اور کہا کہ عمران خان پاکستان کیلئے سیکورٹی رسک بن چکے ہیں۔ مقررین نے عمران خان سے فوری طور پر مستعفی ہونے اور عام انتخابات کا مطالبہ کیا۔ مقررین نے وزیر اعظم عمران خان پر شدید تنقید کر تے ہوئے کہا کہ آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کے حوالے سے حکومت نے دفاعی ادارے کے ساکھ کو نقصان پہنچایا جس سے عالمی سطح پر بھی پاکستان کی جک ہنسائی ہوئی ہے۔ موجودہ حکومت خارجہ پالیسی سمیت ہر محاذ پر ناکام ہو چکی ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت نیب کو انتقامی کاروائی کیلئے استعمال کر رہی ہے۔ مقررین نے الیکشن کمشنر سے مطالبہ کیا کہ فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ ہنگامی بنیادوں پر کیا جائے اور چیف الیکشن کمشنر اپنی مدت ملازمت پوری کرنے سے پہلے روزانہ کی بنیاد پر سماعت کرکے اس اہم نو عیت کے کیس کو منطقی انجام تک پہنچائے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان نے کشمیر پر سودا بازی کی ہے اور اب مگر مچھ کے آنسو بہا رہے ہیں۔ مقررین نے ناروے میں قرآن پاک کی بے حرمتی میں ملوث ملزم کو قرار واقعی سزا دینے کا مطالبہ کیا اور ناروے سے سفارتی تعلقات ختم کا مطالبہ کیا۔ 

مزید : صفحہ اول