وہ جاندار جس کی الٹی کی قیمت بھی 50کروڑ روپے تک ہوتی ہے

وہ جاندار جس کی الٹی کی قیمت بھی 50کروڑ روپے تک ہوتی ہے
وہ جاندار جس کی الٹی کی قیمت بھی 50کروڑ روپے تک ہوتی ہے
سورس:   Pxhere

  

بنکاک(مانیٹرنگ ڈیسک) وہیل مچھلی ایک ایسا جانور ہے جس کی قے اتنی مہنگی فروخت ہوتی ہے کہ سن کر آدمی دنگ رہ جائے۔

میل آن لائن کے مطابق وہیل کی قے کو ’امبر گریس‘ کہتے ہیں۔ اس میں ’امبرین‘ پایا جاتا ہے جو پرفیومز بنانے میں استعمال ہوتا ہے۔ پرفیومز کی خوشبو اسی امبرین کی وجہ سے دیر تک برقرار رہتی ہے۔ گزشتہ دنوں تھائی لینڈ میں ایک غریب ماہی گیر کو وہیل مچھلی کی قے ملی اور وہ بیٹھے بٹھائے کروڑ پتی بن گیا۔اس ماہی گیر کا نام ناریس سواناسینگ بتایا گیا ہے جسے دنیا میں وہیل کی قے کا سب سے بڑا لوتھڑا ملا، جس کا وزن 100کلوگرام تھا اور اس کی مالیت 24لاکھ پاﺅنڈ (تقریباً 51کروڑ روپے)بنتی ہے۔

نوریس کو جب امبرگریس ملا تو اسے معلوم نہیں تھا کہ یہ کیا چیز ہے۔ اس نے اپنے ہمسائے کو یہ دکھایا اور پوچھا کہ یہ کیا ہے۔ اس کا ہمسایہ ماہی گیر امبرگریس کے بارے میں جانتا تھا چنانچہ اس نے نوریس کو بتایا کہ یہ انتہائی مہنگی چیز ہے۔ اس نے نوریس سے کہا کہ وہ مقامی حکام کو مطلع کرے۔ مقامی افسران نوریس کے گھر آئے اور انہوں نے تصدیق کی کہ یہ امبرگریس ہی ہے۔ نوریس کا کہنا تھا کہ ”اب تک میری زندگی انتہائی کسمپرسی میں گزر رہی تھی۔ میں سوچ بھی نہیں سکتا تھا کہ اس طرح اچانک میرے ہاتھ خزانہ لگ جائے گا۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -