یورپ میں اگر صدر سرکاری دفتر میں نجی کاروباری معاہدے کا گواہ بنتا تو جیل جاتا: پرویز رشید 

یورپ میں اگر صدر سرکاری دفتر میں نجی کاروباری معاہدے کا گواہ بنتا تو جیل ...
یورپ میں اگر صدر سرکاری دفتر میں نجی کاروباری معاہدے کا گواہ بنتا تو جیل جاتا: پرویز رشید 
سورس: File Photo

  

 لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنمااور سابق وفاقی وزیر اطلاعات  پرویز رشید نے کہا ہے کہ وہ یورپ جسے عمران خان جانتے ہیں یا وہ ریاستِ مدینہ جس کا خواب وہ عوام کو دکھاتے ہیں، وہاں اگر کوئی صدر سرکاری دفتر میں نجی کاروباری دستاویزات معاہدے کا گواہ بنا ہوتا تو جیل کی ہوا کھاتا، ہم تو یہ سمجھتے تھے صدر علوی صرف آرڈیننس جاری کرنے والی فیکٹری ہیں، اب پتہ چلاصدرعارف  علوی امریکیوں سے مل کرپاکستانیوں کی بتیسیاں نکلوانے کا دھندہ شروع کر رہے ہیں۔

نجی ٹی وی کے مطابق پرویز رشید کا کہنا تھا کہ سرکاری لوگو والے سبز میز پوش پر نجی کاروباری دستاویزات پر معاہدہ ہوا، یورپ یا ریاست مدینہ میں صدر سرکاری دفتر میں بیٹے اور امریکی کمپنی کے معاہدے کا گواہ بنا ہوتا تو جیل کی ہوا کھاتا۔ پرویز رشید نے صدر مملکت کے بیٹے کی گورنر ہاﺅس میں امریکی کمپنی سے معاہدے کی تصویربھی شیئرکی۔ان کا مزید کہنا تھا کہ ہم تو یہ سمجھتے تھے صدر علوی صرف آرڈیننس جاری کرنے والی فیکٹری ہیں، اب پتہ چلاصدر علوی امریکیوں سے مل کرپاکستانیوں کی بتیسیاں نکلوانے کا دھندہ شروع کر رہے ہیں۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -