امریکی قونصلیٹ جنرل لاہور کے زیر اہتمام اعلیٰ تعلیمی اداروں میں انگریزی زبان کے تدریسی طریقوں پر پہلے بین الاقوامی سمپوزیم کی افتتاحی تقریب

 امریکی قونصلیٹ جنرل لاہور کے زیر اہتمام اعلیٰ تعلیمی اداروں میں انگریزی ...
 امریکی قونصلیٹ جنرل لاہور کے زیر اہتمام اعلیٰ تعلیمی اداروں میں انگریزی زبان کے تدریسی طریقوں پر پہلے بین الاقوامی سمپوزیم کی افتتاحی تقریب

  

لاہور  (ڈیلی پاکستان آن لائن)   امریکی قونصلیٹ جنرل لاہور نے PakTESOL  پلیٹ فارم سے اعلیٰ تعلیمی اداروں میں انگریزی زبان کے تدریسی طریقوں پر پہلے بین الاقوامی سمپوزیم کی افتتاحی تقریب کی میزبانی کی۔ پاک ٹی ایس او ایل چیپٹر کا قیام 2019 میں علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی کے ساتھ شراکت میں، امریکی مشن کے ایک لاکھ 79 ہزار 846 ڈالر کے فنڈ کے ذریعے  کیا گیا تھا۔ PakTESOL نے پاکستان میں آٹھ چیپٹر قائم کیے ہیں اور انگریزی زبان کے اساتذہ کے لیے دس علاقائی کانفرنسوں، ورکشاپس اور سمپوزیم کا اہتمام کر رہا ہے۔

امریکی قونصلیٹ جنرل لاہور کے ترجمان کارل راجرز نے تقریب سے خطاب کیا اور اعلیٰ تعلیم اور پاکستان کی معاشی ترقی کے لیے انگریزی زبان کی اہمیت پر روشنی ڈالی۔ انہوں نے کہا 'PakTESOL انگریزی زبان کے پیشہ ور افراد کو اپنے علم، تجربے اور بہترین طریقوں کو شیئر کرنے کا ایک قیمتی موقع فراہم کرتا ہے۔ اس سال امریکہ اور پاکستان دو طرفہ تعلقات کے 75 سال کا جشن منا رہے ہیں اور یہ پروگرام ہماری دیرینہ شراکت داری کی ایک اور مثال ہے۔”

راجرز نے یونیورسٹی آف سنٹرل پنجاب، PakTESOL   کی قیادت، اور پروگرام کے رضاکاروں کا ان کی لگن، محنت، اور سمپوزیم کی میزبانی اور انعقاد کے عزم پر شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ انگریزی زبان سیکھنے کو فروغ دینا اور انگریزی اساتذہ کی مدد کرنا پاکستان کے ساتھ امریکہ کی شراکت داری میں سب سے آگے ہے۔ انگریزی بین الاقوامی رابطے کی زبان ہے اور دنیا بھر کے ممالک کے ساتھ مضبوط تعلقات کو آسان بنانے میں مدد کرتی ہے۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -