طالبات کی بس پر فائرنگ کا واقعہ کیسے پیش آیا، کس نے گولیاں چلائیں؟ ڈی آئی جی انویسٹی گیشن لاہور نے تفصیلات بتا دیں

طالبات کی بس پر فائرنگ کا واقعہ کیسے پیش آیا، کس نے گولیاں چلائیں؟ ڈی آئی جی ...
طالبات کی بس پر فائرنگ کا واقعہ کیسے پیش آیا، کس نے گولیاں چلائیں؟ ڈی آئی جی انویسٹی گیشن لاہور نے تفصیلات بتا دیں

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) ڈی آئی جی انویسٹی گیشن لاہور عمران کشور نے سندر کے علاقے میں طالبات کی بس پر ہونے والی فائرنگ کے واقعے کی تفصیلات بتا دیں۔

نجی ٹی وی ایکسپریس نیوز کے مطابق ڈی آئی جی انویسٹی گیشن عمران کشور نے میڈیا سے گفتگو کرتےہوئے بتایا کہ طالبات کی بس پر فائرنگ کا واقعہ 28 نومبر کو رات ڈیڑھ بجے پیش آیا۔ ملزمان شادی سے واپس آ رہے تھے کہ سندر کے علاقے میں بس پر فائرنگ کر دی۔ ملزمان نشے کی حالت میں تھے، تاحال تفتیش کے مطابق فائرنگ سجاول نے کی۔ 

انہوں نے کہا کہ فائرنگ سے بس میں سوار 2 طالبات زخمی ہو گئیں جن میں سے ایک کی حالت نازک ہے اور وینٹی لیٹر پر ہے جبکہ دوسری طالبہ کی حالت بہتر ہے۔ ملزمان فائرنگ کے بعد موقع سے فرار ہو گئے تھے جن کو گرفتار کر لیا گیا، ان میں سجاول ، ابرار، عبداللہ احتشام، محبوب علی اور ایان شامل ہیں۔ 4 ملزمان لاہور کے علاقے ہنجروال کے رہائشی ہیں۔ ملزمان کی بس ڈرائیور اور طالبات سے شناخت پریڈ بھی کروائی جائے گی۔ ملزمان کے زیر استعمال گاڑی بھی برآمد کر لی جو انہوں نے کرائے پر لے رکھی تھی۔ 

مزید :

جرم و انصاف -