ہوائی جہاز میں انٹرنیٹ تو آپ نے اکثر استعمال کیا ہوگا، لیکن کیا آپ کو معلوم ہے یہ ہوائی جہاز میں چلتا کیسے ہے؟ جانئے وہ بات جو آپ کو معلوم نہیں

ہوائی جہاز میں انٹرنیٹ تو آپ نے اکثر استعمال کیا ہوگا، لیکن کیا آپ کو معلوم ...
ہوائی جہاز میں انٹرنیٹ تو آپ نے اکثر استعمال کیا ہوگا، لیکن کیا آپ کو معلوم ہے یہ ہوائی جہاز میں چلتا کیسے ہے؟ جانئے وہ بات جو آپ کو معلوم نہیں

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لندن(نیوز ڈیسک)زمین پر انٹرنیٹ کی دستیابی تو اب کوئی معمہ نہیں رہا لیکن ہزاروں فٹ کی بلندی پر اڑتے ہوائی جہاز میں مسافروں کو تیز رفتار انٹرنیٹ کیسے دستیا ب ہو جاتا ہے، یہ سوچنے کی بات ہے۔ ٹائمز آف انڈیا کی ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ 35ہزار فٹ کی بلندی پر اُڑتے ہوائی جہاز میں انٹرنیٹ کے سگنل فراہم کرنے کے لئے عموماً دو طرح کے طریقے استعمال کئے جاتے ہیں۔

اول ’گراﺅنڈ ٹو ائیرٹیکنالوجی‘ ہے جس میں زمین پر موجود براڈ بینڈ موبائل ٹاور استعمال کئے جاتے ہیں، جن سے بھیجے گئے سگنل طیارے پر لگاانٹینا وصول کرتا ہے۔ ہوائی جہاز اپنے قریب ترین واقع کسی بھی موبائل ٹاور سے سگنل وصول کرسکتا ہے لیکن عام طور پر جب وہ وسیع و عریض سمندری یا صحرائی علاقوں کے اوپر سے گزرتا ہے تو یہ کنکشن ختم ہوجاتا ہے۔

دوسرا طریقہ سیٹلائٹ ٹیکنالوجی کا ہے جس کے ذریعے سگنل جس طرح شہری علاقوں میں دستیاب ہوتے ہیں اسی طرح سمندری اور صحرائی علاقوں میں بھی دستیاب ہوتے ہیں۔ اس مقصد کے لئے ہوائی جہاز کا انٹینا جیو سٹیشنری سیٹلائٹ (وہ سیٹلائٹ جو زمین کی حرکت کے ساتھ ساتھ حرکت کرتے ہیں اور یوں کسی بھی ایک جگہ کے لحاظ سے تقریباً ساکت رہتے ہیں) سے سگنل وصول کرتا ہے۔ زمین سے سگنل پہلے سیٹلائٹ تک جاتے ہیں اور پھر سیٹلائٹ سے ہوائی جہاز تک، اسی طرح ہوائی جہاز سے انٹرنیٹ کے سگنل واپس پہلے سیٹلائٹ اور پھر زمین تک پہنچتے ہیں۔

جہاز کے اندر یہ سگنل وائی فائی راﺅٹر کے ذریعے نشر کئے جاتے ہیں۔ سیٹلائٹ کنکشن کی سپیڈ عموماً 12Mbps ہوتی ہے، تاہم برطانوی سیٹلائٹ ٹیلی کمیونیکیشن کمپنی انمار سیٹ کا کہنا ہے کہ اگلے چھ سال میں کل ہوائی جہازوں میں سے تقریباً نصف میں دوران پرواز وائی فائی کی سہولت دستیاب ہوگی۔ اگلے دو سال میں ہی اس انڈسٹری کی آمدن ایک ارب ڈالر سے بڑھ جائے گا۔

فضائی کمپنیوں کے لئے دوران پرواز انٹرنیٹ فراہم کرنے کے اخراجات زمین پر انٹرنیٹ کی فراہمی کی نسبت بہت زیادہ ہوتے ہیں۔ ائیرلائنیں اس کے لئے عموماً انٹرنیٹ کمپنیوں سے ماہانہ پیکج حاصل کرتی ہیں، تاہم متعدد ائیرلائنیں مسافروں کو یہ سہولت مفت فراہم کرتی ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس