سیشن جج کا 6 بچے باپ سے لیکر ماں کے حوالے کرنے کا حکم

سیشن جج کا 6 بچے باپ سے لیکر ماں کے حوالے کرنے کا حکم

لاہور(کرائم رپورٹر)سیشن عدالت نے چھ بچے باپ سے لیکر ماں کے حوالے کرنے کا حکم دے دیا، عدالتی حکم کے بعد باپ احاطہ عدالت کے باہر دھائیاں دیتا رہا۔ایڈیشنل سیشن جج شاہد منیر نے صائمہ بی بی کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار کے وکیل سردار عادل رندھاوا نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ درخواست گزار کے شوہر خالد نے معمولی تلخ کلامی کے بعد اپنی بیوی پر تشدد کر کے گھر سے نکال دیا ہے،شوہر نے گھر سے نکالنے کے بعد چھ کمسن بچوں کو زبردستی اپنے پاس رکھا ہوا ہے،کمسن بچے اپنی ماں کے بغیر نہیں رہ سکتے ہیں اور کوئی بھی ماں سے بہتر کوئی بھی بچوں کی پرورش نہیں کر سکتا ہے،درخواست گزار کے وکیل نے استدعا کی کہ عدالت بچوں کی بہتر پرورش کے لیے بچوں کو ماں کے حوالے کرنے کے احکامات جاری کرے،پولیس نے عدالتی حکم پرپولیس نے چھ کمسن بچوں کو باپ سمیت عدالت میں پیش کیا تھا،کمرہ عدالت میں بچوں نے بھی والد کے ساتھ جانے سے انکار کر دیا عدالت نے تمام دلائل سننے کے بعد بچوں کو ماں کے حوالے کرنے کے احکامات جاری کر دیے عدالتی حکم کے بعد بچوں کا باپ احاطہ عدالت کے باہر دہائیاں دیتا رہا اور روتا رہا۔

مزید : علاقائی