پارلیمانی کمیٹی نے جسٹس منصور علی شاہ کو سپریم کورٹ،جسٹس یاور علی کو چیف جسٹس لاہورہائیکورٹ بنانے کی منظوری دیدی


اسلام آباد(صباح نیوز)پارلیمانی کمیٹی برائے ججز تقرری نے جسٹس منصور علی شاہ کوجج سپریم کورٹ ان کی جگہ یاور علی کوچیف جسٹس لاہورکورٹ مقرر کرنے کی منظوری دیدی۔ کمیٹی نے فیڈرل وفاقی شرعی عدالت کے دو ججز اور سندھ ہائیکورٹ میں 6 ایڈیشنل ججز کی تقرریوں کی بھی منظوری دیدی۔ سفارشات وزیراعظم کے توسط ایوان صدر بھجوادی گئیں، کمیٹی اراکین میں چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار سے ملاقات پر اتفاق ہو گیا ہے۔ چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے کمیٹی اراکین کو اپنی چیف جسٹس سے حالیہ ملاقات کے بارے میں آگاہ کر دیا ہے۔ چیئرمین سینیٹ اراکین کمیٹی کی چیف جسٹس سے ملاقات کا اہتمام کرینگے ،چیئرمین سینیٹ نے کمیٹی اجلاس میں خصوصی طورپر شرکت کی ۔سپریم کورٹ نے ججزتقرری میں پارلیمینٹ کے موثرکردار سے اتفاق کیا ہے اوراس بارے میں کمیٹی کو آگاہ کردیا گیا ۔ پارلیمانی کمیٹی برائے ججز تقرری کا اجلاس گزشتہ روز کمیٹی کے سینئر رکن سید نویدقمر کی صدارت میں پارلیمینٹ ہاؤس میں ہوا۔ قائد ایوان راجہ ظفرالحق،شاہ محمود قریشی ،الیاس احمدبلور،ارشد لغاری ،جاوید عباسی اور دیگر شریک ہوئے ، اعلیٰ عدلیہ میں ججز تقرریوں کے بارے میں جوڈیشل کمیشن کی سفارشات پر غور کیا گیا۔ چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس سید منصور علی شاہ کو سپریم کورٹ کا جج جبکہ جسٹس یاور علی خان کو چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ تعینات کرنے کی منظوری دیدی گئی ۔ اسی طرح سید فاروق شاہ اور شوکت علی رئیسانی کووفاقی شرعی عدالت میں ججز مقرر کرنے کی توثیق کر دی گئی اور رواں ہفتے ان ججز کاحلف اٹھانے کا قوی امکان ہے ۔ سندھ ہائیکورٹ میں ارشاد شاہ ، آغا فیصل، شمس عباسی، امجد سہوتو ، کوثر سلطان ، شمس الدین کو ایڈیشنل ججز لگانے کی سفارشات کی توثیق کرتے ہوئے وزیراعظم کے توسط سے انہیں ایوان صدر کو بھیج دیا گیا ۔ اجلاس میں چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی خصوصی طور پر شریک ہوئے اور چیف جسٹس آف پاکستان سے اپنی حالیہ ملاقات کے بارے میں آگاہ کیا۔ انھوں نے ججز تقرری میں پارلیمینٹ کے موثر کردارکے بارے میں آگاہ کیا۔ ارکان کے اتفاق رائے سے کمیٹی نے چیف جسٹس آف پاکستان سے ملنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ کمیٹی چیئرمین سید نوید قمر نے کہا ہے کہ پارلیمینٹ اور سپریم کورٹ دونوں اطراف میں ججز تقرریوں کے معاملے پر پارلیمانی کمیٹی کو موثر بنانے پر اتفاق پایا جاتا ہے۔چیف جسٹس سے ملاقات کیلئے چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی کے توسط سے ہم سپریم کورٹ جائینگے اور چیئرمین سینیٹ اس حوالے سے چیف جسٹس سے رابطہ کرینگے۔
پارلیمانی کمیٹی برائے ججز

مزید : کراچی صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...