دیگر ممالک کی طرح پاکستان میں بھی بلڈ، سپر ، بلیو مون ، چاند گرہن کا نظارہ


میلسی، ٹھٹھہ صادق آباد (سپیشل رپورٹر،نمائندہ پاکستان) دنیاکے دیگرممالک کی طرح پاکستان میں بھی بلڈ ،سپر،بلیومون اورچاندگرہن کانظاراکیاگیایہ فلکیاتی ایونٹس 1886کے بعد(بقیہ نمبر45صفحہ7پر )

31جنوری کی رات کوتخلیق ہوازمین کے سایہ کی وجہ سے چاندطلو ع ہوتے وقت سرخ تھاجسے بلڈمون کہتے ہیں رات کوجب چاند طلوع ہوااسے گرہن لگاہواتھاجواسی رات 9بجکر10منٹ پرگرہن چھٹ گیاچاند کاحجم معمول سے 7فیصد زیادہ اورروشنی 14فیصد زیادہ تھی یوں چاندزمین کے قریب ہونے کی وجہ سے بڑانظرآیاجسے سپرمون کہتے ہیں گرہن چھٹ جانے کے بعدچاند کی نیلگون روشنی سے زمین نہاگئی بادلوں اورچاند گرہن کی آنکھ مچولی بھی جاری رہی نیلے چاند کوبلیومون کہاجاتاہے شہری اس فلکیاتی ایونٹس کامشاہدہ کرتے رہے یکم جنوری کی رات کوبھی بلیومون تھاواضح رہے کہ 15فروری کوسورج گرہن ہوگاجورات ہونے کی وجہ سے پاکستان میں نظرنہیں آئے گاماہرین کے مطابق ماہ مئی میں بھی بلیومون کاامکان ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...