’’ میں گھر پر اکیلی تھی کہ 2 لوگ دیوار کود کر آگئے، مجھے گن پوائنٹ پر برہنہ کیا لیکن پھر ساتھ ہی زمین ہلنے لگ گئی اور۔ ۔ ۔ ‘‘ زلزلے کے دوران خیبرپختونخوا کی لڑکی کیساتھ کیا ہوا؟ انتہائی شرمناک تفصیلات بیان کردیں

01 فروری 2018 (10:10)

چارسدہ (ڈیلی پاکستان آن لائن) دو اوباش نوجوانوں نے 16سالہ لڑکی کو گن پوائنٹ پرکو برہنہ کر دیا ،نوجوان لڑکی کی ویڈیو بنا کر بد فعلی کی کو شش کر رہے تھے کہ اس دوران خوف ناک زلزلہ آگیا اور ملزمان حواس باختہ ہو کر بھاگ گئے ،پولیس نے ایف آئی آر درج کر لی ۔

نجی ٹی وی چینل کے مطابق تھانہ پڑانگ کے حدود میاں کلے میں دو اوباش نوجوانوں واصف  اور اعظم دیوار پھلانگ کر فقیر گل نامی شخص کے گھر داخل ہو گئے اور اس کی 16سالہ بیٹی ’ع‘ کو گن پوائنٹ پر کمرے کے اندر لے گئے اور زبر دستی ان کے کپڑے اتا ر کر ویڈیو بنا کر بد فعلی کی کو شش کر رہے تھے کہ اس دوران خوفناک زلزلہ آگیا جس سے خواس باختہ ہو کر ملزمان فرار ہو گئے ۔

تھانہ  پڑانگ  میں متاثرہ لڑکی نے پولیس کو رپورٹ درج کر تے ہوئے بتایا کہ ان کی والدہ ختم القرآن کیلئے رشتہ داروں کے گھر گئی تھی اور وہ گھر میں اکیلی تھی کہ اس دوران مذکورہ ملزمان دیوار پھلانگ کر گھر کے اندر داخل ہوئے۔ دونوں ملزمان پستول تان ان کو زبر دستی کمرے کے اندر لے گئے ۔

دوسری طرف ایس ایچ او پڑانگ منظور خان نے اس حوالے سے بتایاکہ میڈیکل رپورٹ میں زیادتی کا کوئی ذکر نہیں اور پولیس ملزمان کی گرفتاری کیلئے تمام تر وسائل بروئے کار لا رہی ہے۔ 

مزیدخبریں