مارننگ شو میں ”یوگا“ کے نام پر لڑکی نے لڑکے کیساتھ مل کر ایسا کام کردیا کہ ملک بھر میں تہلکہ مچ گیا، ہر کوئی غضبناک ہو گیا، دیکھ کر آپ کی آنکھیں بھی کھلی کی کھلی رہ جائیں گی

مارننگ شو میں ”یوگا“ کے نام پر لڑکی نے لڑکے کیساتھ مل کر ایسا کام کردیا کہ ...
مارننگ شو میں ”یوگا“ کے نام پر لڑکی نے لڑکے کیساتھ مل کر ایسا کام کردیا کہ ملک بھر میں تہلکہ مچ گیا، ہر کوئی غضبناک ہو گیا، دیکھ کر آپ کی آنکھیں بھی کھلی کی کھلی رہ جائیں گی

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) گزشتہ روز پاکستان کے ایک مارننگ شو نے سوشل میڈیا پر اپنے پروگرام کی ایک ویڈیو جاری کی جہاں معمول کی باتیں ہو رہی تھیں اور ماہرین کا ایک پینل ”یوگا“ کرنے والے لڑکے اور لڑکی کے مختلف ”پوز“ سے متعلق گفتگو کر رہا تھا کہ کوئی بھی 2 افراد گھر یا پارک میں باآسانی ایسا کر سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔ملائکہ اروڑا کی بہن امریتا اروڑا نے اپنی 40 ویں سالگرہ کے موقع پر دنیا کا فحش ترین کیک انتہائی شرمناک طریقے سے کاٹ لیا، سوشل میڈیا پر ہنگامہ برپا ہو گیا

کچھ لوگوں نے اس ویڈیو کو بہت زیادہ سراہا لیکن صارفین کی اکثریت نے اس ویڈیو پر شدید غم و غصے کا اظہار کیا اور اس معاملے پر سوشل میڈیا صارفین میں ہی ایک ”جنگ“ شروع ہو گئی۔ ایک گروپ کا کہنا تھا کہ یوگا بہترین ہے اور اچھی صحت کے حصول کیلئے ایک معمول کا حصہ بنانا چاہئے لیکن دوسرے گروپ کا کہنا تھا کہ ایک لڑکا اور لڑکی کو نیشنل ٹی وی پر غیر اخلاقی حرکتیں کرتے دکھایا جا رہا ہے۔

بہت سے صارفین نے ایسے کاموں کو زلزلے کی وجہ قرار دیا اور کہا کہ لوگوں کو معلوم ہونا چاہئے کہ یہ اسلامی جمہوریت پاکستان ہے اور اس طرح کی غیر اخلاقی اور غیر مذہبی حرکتیں ہی زلزلوں کا باعث بنتی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔”مفتی صاحب عشاءکے بعد مجھے خدمت کیلئے کمرے میں بلاتے اور پھر۔۔۔“ مدرسے میں تعلیم حاصل کرنے والے نوجوان نے اپنے ساتھ کئی سالوں تک پیش آنے والا واقعہ سنا دیا، ایسا دعویٰ کر دیا کہ ہر کسی کی روح کانپ اٹھی

شعیب چوہدری نے لکھا ”لعنت ہے ایسے مارننگ شو پر“

عدنان علی کو شرارت سوجھی جنہوں نے لکھا ”کیمرہ مین گھٹیا ہے، اسے فوکس کرنا تھا کیونکہ پیچھے سے تو یوگا سمجھ ہی نہیں آیا، دوبارہ کروائیں یہ سب“

بشریٰ کبیر نے لکھا ”اللہ کا خوف ہی نہیں رہا اب تو، حد ہو گئی ہے“

روشنی انصاری نے لکھا ”حد ہو گئی ہے بے غیرتی کی“

معیز مغل نے شرارتی انداز میں اپنے دوست کو ٹیگ کرتے ہوئے لکھا ”بھائی جم چھوڑو، یوگا کرتے ہیں“

آمنہ طارق نے لکھا ”مارننگ شو پر پابندی لگنی چاہئے، مسلمان عورت کو یہ سب زیب نہیں دیتا“

فرید ڈھلوں نے لکھا ”دیکھو یار! یہ حال ہے ہماری قوم کا“

ماہرہ اظہر نے لکھا ”یہ ہمارا میڈیا کن چیزوں کی تشہیر کر رہا ہے؟؟؟ ان لوگوں کے خلاف کوئی ایکشن کیوں نہیں لیا جاتا۔۔۔ بے غیرت لوگ“

تہمینہ شہزاد نے لکھا ”بے غیرت۔۔۔ یہ مارننگ شو والوں کا تو بس نہیں چلتا۔۔۔ مردود۔۔۔“

ساجد مغل قادری نے لکھا ”یہ سب بیرونی فنڈنگ کا نتیجہ ہے اور یہ لوگ آلہ کار ہیں۔ یہ سب یورپ کی ایجنسیاں پیسہ دے کر ان لوگوں کے ذریعے کروا رہی ہیں۔ سب یورپین این جی اوز کو پاکستان ہی کیوں ملا ہوا ہے، سوشل ویلفیئر کے نام پر فنڈنگ کر کے اپنا کلچر پاکستان سپلائی کر رہے ہیں اور یہ دیسی لبرلز اور لنڈے کے انگریز اس بے حیائی کو سپورٹ کر رہے ہیں“

مزید : ڈیلی بائیٹس /علاقائی /اسلام آباد /پنجاب /لاہور