وہ وقت جب وکیل نے بھری عدالت میں ہائیکورٹ کے جج کو قتل کی دھمکی دے دی .... جانئے تاریخ سینہ بہ سینہ میں

وہ وقت جب وکیل نے بھری عدالت میں ہائیکورٹ کے جج کو قتل کی دھمکی دے دی .... جانئے ...
وہ وقت جب وکیل نے بھری عدالت میں ہائیکورٹ کے جج کو قتل کی دھمکی دے دی .... جانئے تاریخ سینہ بہ سینہ میں

  

ایک وکیل کیخلاف توہین رسالت کا مقدمہ بنادیاگیا ،ہائیکورٹ کے جسٹس افضل کی عدالت میں درخواست ضمانت کی سماعت شروع ہوئی، حالات و واقعات کو دیکھ کرفاضل جج سمجھ رہے تھے کہ مقدمہ نہیں بنتا، ضمانت لینا چاہتے تھے لیکن وکلا استغاثہ درخواست مسترد کروانا چاہ رہے تھے اورموقف اپنایاکہ ضمانت نہ لی جائے ، لیکن جب بات نہ بنی تو کہاکہ جان کو خطرہ ہے۔ فاضل عدالت نے استفسار کیاکہ کون کہتاہے؟ جواب ملا کہ بار میں وکلا اس قسم کی باتیں کررہے ہیں کہ جان کو خطرہ ہوسکتاہے ۔ استغاثہ کو دوسرے دن ایسے افراد کو پیش کرنے کی مہلت مل گئی اور جب اگلے دن سماعت شروع ہوئی تو ۔ ۔۔ ۔ مزید ویڈیو دیکھئے

مزید : ویڈیو گیلری