ریونیو شارٹ فال بڑھنا قابل تشویش ہے‘ راؤ خورشید علی

ریونیو شارٹ فال بڑھنا قابل تشویش ہے‘ راؤ خورشید علی

  



لاہور(لیڈی رپورٹر)چیئرمین کیمیکل امپورٹر اینڈ ایکسپورٹرز ایسوسی ایشن راؤ خورشید علی خان نے کہا ہے کہ حکومتی معاشی ٹیم کی سولو فلائٹ پالیسیاں معیشت کیلئے نقصان کا باعث ثابت ہو رہی ہیں، ایف بی آرمیں اصلاحات کے عمل کا مکمل نہ ہونا اور ریو نیو شارٹ فال کا بڑھنا قابل تشویش ہے پالیسی ریٹ کی موجودہ شرح کے ساتھ کسی بھی طرح کا کاروبار ترقی نہیں کر سکتا بلکہ سرمایہ کاری منجمد ہو گئی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے لاہور چیمبر میں کیمیکل کے امپورٹرز اور ایکسپوٹرز کے وفد سے ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ جب ڈالر 165 روپے پر پہنچا تو مہنگائی کا طوفان آیا لیکن اب ڈالر کی قدر نیچے آنے اور روپیہ مستحکم ہونے کے باوجود مہنگائی کی شرح میں کمی نہیں ہو رہی۔پالیسی ریٹ کو کئی ماہ سے بلند ترین سطح پر بر قر ار رکھا گیا ہے جس کی وجہ سے ہر طرح کے کاروبار میں سرمایہ کاری کا رجحان نہ صرف کم ہوا ہے بلکہ سرمایہ کاری منجمد ہو گئی ہے جس سے روزگار کے نئے مواقع پیدا نہیں ہو رہے۔ راؤ خورشید علی خان نے کہا کہ حکومت کی جانب سے برآمدات بڑھانے کے حوالے سے اعلانات پر عملی پیشرفت نہیں کی جارہی بلکہ اب بھی کئی طرح کی پیچیدگیاں موجود ہیں۔ آج بنگلہ دیش ہم سے برآمدات میں آگے نکل گیا ہے جو ہمارے پالیسی سازوں کیلئے لمحہ فکریہ ہونا چاہیے۔

مزید : کامرس