میوزک زندگی ہی نہیں میری ذات کا حصہ ہے،رفیق حسین

    میوزک زندگی ہی نہیں میری ذات کا حصہ ہے،رفیق حسین
     میوزک زندگی ہی نہیں میری ذات کا حصہ ہے،رفیق حسین

  



لاہور(فلم رپورٹر) سینئرمیوزک ڈائریکٹراور غزل گائیکرفیق حسین نے کہا ہے کہ میوزک کی کوئی انتہا نہیں ہوتی میوزک میری زندگی ہی نہیں میری ذات کا بھی حصہ ہے اور میں میوزک میں کسی حد بندی کا قائل نہیں،اس دنیا میں جو جہاں تک پہنچنا چاہے اس کے لئے آسمان کھلا ہے۔ان کا مزیدکہنا تھا کہ مجھے مختلف قسم کا میوزک پسند ہے اسی لئے میں نے پاپ، کلاسیکل یا کسی ایک کیٹگری تک اپنے آپ کو محدود نہیں کیا۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ میرے خیال میں ایک کریکٹر کے لئے ایک ہی آواز سوٹ کرتی ہے۔ اس سے ٹیمپو بنا رہتا ہے۔ایک فلم میں ایک ہیرو کے گانے ایک ہی آواز میں ہوں، وہی اچھا رہتا ہے۔

رفیق حسین نے مزید کہا کہ فلم انڈسٹری کی بہتری کے لئے میوزک کے شعبے میں بھی بہتری لانا ہوگی تبھی جا کرہم اچھی اور سپرہٹ فلموں کے ذریعے شوبزانڈسٹری کی ترقی میں کردارادا کرسکتے ہیں۔ رفیق حسین نے کہا کہ موجودہ دور میں پاکستان فلم انڈسٹری نئے مراحل طے کررہی ہے لیکن میوزک کے شعبے میں آج بھی فقدان دکھائی دیتا ہے اس لئے ضروری ہے کہ فوری طور پر میوزک کے شعبے پر کام کیا جائے اور اس کی بدولت پاکستان فلم انڈسٹری کو انٹرنیشنل مارکیٹ میں رسائی دی جائے۔انہوں نے کہا کہ فلموں کی کامیابی میں میوزک اہم کرداراداکرتا ہے۔

مزید : کلچر