شہباز شریف کی جانب سے عدالت کا درواز ہ کھٹکھٹانے کے بعد برطانوی صحافی ڈیوڈ روز بھی میدان میں آگئے

شہباز شریف کی جانب سے عدالت کا درواز ہ کھٹکھٹانے کے بعد برطانوی صحافی ڈیوڈ ...
شہباز شریف کی جانب سے عدالت کا درواز ہ کھٹکھٹانے کے بعد برطانوی صحافی ڈیوڈ روز بھی میدان میں آگئے

  



لندن(ڈیلی پاکستان آن لائن )معروف برطانوی صحافی ڈیوڈ روز نے کہا ہے کہ وزیر اعظم عمران خان کے ساتھ کام کرنے سے پہلے شہزاد اکبر انسانی حقوق کے لیے سرگرم تھے ،مجھے شہزاد اکبر کے ساتھ کندھے سے کندھا ملا کر لڑنے پر فخر ہے ۔ان کا کہنا ہے کہ وہ پاکستان اور پاکستانیوں سے پیار کرتے ہیں اور اُن کی پرواہ کرتے ہیں اس لیے پاکستان جاتے رہتے ہیں ۔

میڈ یا رپورٹس کے مطابق برطانوی صحافی ڈیوڈ روز  نے کہا کہ شہباز شریف کے مقدمے پر کوئی تبصرہ نہیں کروں گا ، مجھ پر مسلم دشمن اور پاکستان مخالف ہونے کے الزامات ہتک آمیزہیں ،زندگی کا بیشتر حصہ نسل پرستی کے خلاف لڑتے ہوئے گزرا ،دہشت گردی کے خلاف جنگ میں نا انصافیوں اور ڈرون حملوں کی تحقیقات پر کئی برس کام کیا ۔

واضح رہے کہ ڈیوڈ روز اور ’میل آن سنڈے‘ نیلسن کے رہائشی برطانوی نژاد پاکستانی واجد اقبال سے کیس ہار گئے، کیس شروع ہونے سے پہلے ہی اخبار نےعدالت  کے باہر تصفیہ کر لیا جبکہ کیس کا آغاز رواں سال اپریل میں ہونا تھا۔یہ بھی یاد رہے کہ سابق وزیر اعلیٰ پنجاب رہے کہ  مسلم لیگ ن کے صدر شہبازشریف نے بھی اپنے خلاف خبر شائع کرنے پر ڈیوڈ روز اور برطانوی اخبار ڈیلی میل کے خلاف لندن کی عدالت میں کیس دائر کر دیا ہےجسکی سماعت کا سلسلہ ابھی شروع ہو گا۔

مزید : Breaking News /اہم خبریں /قومی