زبیر یوسف بٹ نے 2015کو ویٹ لفٹنگ کی ترقی کا سال قراردیدیا

زبیر یوسف بٹ نے 2015کو ویٹ لفٹنگ کی ترقی کا سال قراردیدیا
زبیر یوسف بٹ نے 2015کو ویٹ لفٹنگ کی ترقی کا سال قراردیدیا

  

لاہور(پ ر) سابق انٹرنیشنل ویٹ لفٹر اور پاکستان ویٹ لفٹنگ فیڈریشن کی ٹیکنیکل آفیشلز کمیٹی کے چیئرمین محمد زبیر یوسف بٹ نے سال 2015 کو ملک میں ویٹ لفٹنگ کے کھیل کی ترقی اور گراس روٹ لیول سے فروغ کا سال قرار دیا ہے۔۔ پاکستان اولمپک ایسوسی ایشن کی ایگزیکٹو کونسل کے ممبر سابق انٹرنیشنل ویٹ لفٹر محمد زبیر یوسف بٹ نے کہا کہ پاکستان میں ویٹ لفٹنگ سمیت دیگر کھیلوں کا بے پناہ ٹیلنٹ موجود ہے لیکن انٹرنیشنل معیار کی سہولتوں کی عدم دستیابی، کرپشن، اقرباء پروری اور میرٹ کے قتل عام کی وجہ سے وہ ٹیلنٹ ضائع ہو رہا ہے۔ محمد زبیر یوسف بٹ نے کہا کہ اگر حکومت انٹرنیشنل مقابلوں میں پاکستان کا سبز ہلالی پرچم بلند دیکھنا چاہتی ہے تو وزیراعظم میاں نواز شریف کو فوری طور پر ایکشن لیتے ہوئے کھیلوں سے انسانی اسمگلنگ، کرپشن، اقرباء پروری اور سفارشی کلچر کو ختم کرتے ہوئے ملکی کھیلوں کو تباہی کی راہ پر گامزن کرنے والے افراد کے خلاف تحقیقاتی کمیشن تشکیل دے کر غیر جانبدارانہ انکوائری کروا کر ایسے افراد کو عبرت کا نشان بنانا ہو گا۔ محمد زبیریوسف بٹ نے وزیراعظم میاں نواز شریف سے مطالبہ کیا کہ ویٹ لفٹنگ کے کھیل کو فروغ دینے اور جدید خطوط پر استوار کرنے کیلئے پاکستان ویٹ لفٹنگ فیڈریشن کو 10کروڑ روپے کی گرانٹ جاری کی جائے تاکہ پاکستان ویٹ لفٹنگ فیڈریشن کے صدر ڈاکٹر نعمان ادریس بٹ اور سیکریٹری جنرل خضر حیات راجا، پی ڈبلیو ایف کے سرپرست شیخ ریاض الدین کی سرپرستی میں ملک کے بڑے شہروں لاہور، کراچی، ملتان، کوئٹہ، پشاور اور راولپنڈی میں عالمی معیار کی سہولتوں سے آراستہ ویٹ لفٹنگ اکیڈمیاں قائم کر کے پاکستان میں ویٹ لفٹنگ کے کھیل کا مستقبل روشن بنائیں۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -