لاہور ہائیکورٹ نے پیپکو کواین ٹی ڈی سی میں بھرتیوں سے روک دیا

لاہور ہائیکورٹ نے پیپکو کواین ٹی ڈی سی میں بھرتیوں سے روک دیا

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے پیپکو کو نیشنل ٹرانسمیشن اینڈ ڈسٹری بیوشن کمپنی میں بھرتیاں کرنے سے روکتے ہوئے حکم امتناعی جاری کر دیا۔جسٹس مسعود عابد نقوی نے کیس کی سماعت کی۔درخواست گزار کے وکیل ملک اویس نے موقف اختیار کیا کہ پیپکو اور نیشنل ٹرانسمیشن اینڈ ڈسٹری بیوشن کمپنی دو مختلف خود مختارحکومتی ادارے ہیں مگر اسکے باوجود پیپکو حکام اپنے اختیارات سے تجاوز کرتے ہوئے این ٹی ڈی سی میں بھرتیوں کا عمل جاری رکھے ہوئے ہیں۔انہوں نے عدالت میں موقف اختیا ر کیا کہ قانونی طور پر کوئی بھی خود مختار ادارہ دوسرے خود مختار ادارے کے معاملات میں مداخلت کا اختیار نہیں رکھتا لہذا عدالت پیپکو کے غیر قانونی اقدامات کو کالعدم قرار دے۔جس پر عدالت نے پیپکو کو نیشنل ٹرانسمیشن اینڈ ڈسٹری بیوشن کمپنی میں بھرتیاں کرنے سے روکتے ہوئے حکم امتناعی جاری کر دیا۔عدالت نے ایم ڈی پیپکو کو 16فروری کے لئے نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا۔

روک دیا

مزید :

صفحہ آخر -