ایل پی جی نرخوں میں اضافہ کیخلاف احتجاجی ریلی، رکشہ ڈرائیور کا اقدام خود سوزی

ایل پی جی نرخوں میں اضافہ کیخلاف احتجاجی ریلی، رکشہ ڈرائیور کا اقدام خود ...

  

ملتان، وجھیانوالہ( خصوصی رپورٹر ، سپیشل رپورٹر ، نامہ نگار ) متحدہ شہری محاذ اور رکشہ ایسو سی ایشن کے زیر اہتمام ایل پی جی کے ریٹ میں ظالمانہ اضافے کے خلاف ریلی نکالی گئی ریلی کے شرکاء نے نواز شریف مرد ہ باد ایل پی جی کی لوٹ مار بند کرو اور رکشہ ڈرائیورز کو خود کشی سے بچاؤ کے نعرے لگا رہے تھے۔ اس موقع پر ایک رکشہ ڈرائیور نے خود پر تیل چھڑک کر خود سوزی کی بھی کوشش کی جسے بچا لیا گیا۔ اس موقع پر تحریک انصاف کے رہنما طارق نعیم اللہ نے اپنے خطاب میں کہا کہ کتنی بد قسمتی ہے کہ بڑے بڑے لوگوں کو ایل پی جی کا کوٹہ دیا گیا ہے کوٹے میں ایل پی جی کا ریٹ 50روپے کلو ہے جبکہ اوپن مارکیٹ میں 140روپے کلو بک رہی ہے جس کا ریٹ سردیوں میں عموماً 200روپے سے تجاوز کر جاتا ہے یہ تمام چور بازاری مرکزی اور صوبائی حکومت کی معاونت سے ہو رہی ہے کسی بھی حکمران کو غریب رکشہ والے 4سے 5کلو ایل پی جی روزانہ استعمال کرتا ہے جس سے تقریباً 300سے 400تک ریٹ میں ظالمانہ اضافہ کی وجہ سے فرق پڑتا ہے انہوں نے کہا کہ اگر نواز شریف غریب عوام سے مخلص ہے تو تمام ایل پی جی کوٹہ کو منسو خ کرے اور کنٹرول ریٹ پر رکشہ والوں کو اور غریب لوگوں کے گھروں میں سستی ایل پی جی فراہم کی جائے اور ایل پی جی کی لوٹ مار کرنے والوں کو سخت سزا دے کر بلیک مارکیٹ کو بند کیا جائے ورنہ پنجاب بھر کے رکشہ یونین ایسو سی ایشن حکومت مخالف مہم چلانے پر مجبور ہو جائیں گی ۔ ایل پی جی کی قیمتیں 200روپے فی کلو گرام ہو کرصارفین کی پہنچ سے دور ہوگئی ہیں۔ ایل پی جی کے ڈیلرز منافع خوری کی اتنہاکو پہنچ چکے ہیں۔ حکومت ایل پی جی کی قیمتوں کو کنٹرول کرنے کیلئے واضح اقدامات اٹھائے۔ اب تک صارفین کی جیبوں پر اربوں روپے کا ڈاکہ پڑ چکا ہے۔

مزید :

صفحہ اول -