لانس نائیک کے قاتل نے اپنا ڈیتھ وارنٹ لاہور ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا

لانس نائیک کے قاتل نے اپنا ڈیتھ وارنٹ لاہور ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا
لانس نائیک کے قاتل نے اپنا ڈیتھ وارنٹ لاہور ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)فوج کے لانس نائیک کے قتل کے مجرم نے اپنے ڈیتھ وارنٹ کو لاہور ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا ۔فیصل آباد میں سزائے موت کے قیدی محمد فیض نے درخواست دائر کی ہے کہ انسداددہشت گردی عدالت نے اسے 2006میں سزائے موت سنائی تھی،محمد فیض پر 2004میں لانس نائیک محمد طارق کو ننکانہ صاحب میں قتل کرنے کا الزام تھا۔
درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ درخواست گزار کی سزاءکا معاملہ ابھی سپریم کورٹ میں زیر التواءہے اس کے باوجود اس کے ڈیتھ وارنٹ جاری کردیئے گئے ہیں اور اسے پھانسی دینے کے لئے 14جنوری کی تاریخ مقرر کی گئی ہے ۔درخواست میں کہا گیا ہے کہ انسداد دہشت گردی کے جج نے ڈیتھ وارنٹ جاری کرتے وقت قانون اور ہائی کورٹ رولز کو بھی ملحوظ خاطر نہیں رکھا ۔
عدالت عالیہ کے رجسٹرار آفس نے اس درخواست پر اعتراض اٹھایا تھا کہ سپریم کورٹ کی طرف سے مجرم کی سزائے موت روکنے کا کوئی حکم ریکارڈ پر موجود نہیں ہے ،اس لئے یہ درخواست ناقابل سماعت ہے تاہم مسٹر جسٹس سردار طارق مسعود نے اعتراض کیس کے طور پر اس درخواست کی سماعت کرتے ہوئے دفتری اعتراض ختم کرتے ہوئے رجسٹرار آفس کو ہدایت کی ہے کہ یہ درخواست سماعت کے لئے متعلقہ ڈویژن بنچ میں پیش کیا جائے ۔

مزید :

لاہور -