ٹرمپ کے لاابالی فیصلے ، بے جا ضد ،کانگریس، حکومت اور وائٹ ہا ؤس مشکلات سے دوچار

ٹرمپ کے لاابالی فیصلے ، بے جا ضد ،کانگریس، حکومت اور وائٹ ہا ؤس مشکلات سے ...

  

واشنگٹن (اظہر زمان، خصوصی رپورٹ) صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے لاابالی فیصلوں اور بے جا ضد کی وجہ سے کانگریس، حکومت اور وائٹ ہا ؤس کو مشکل سے دوچار کر رکھا ہے۔ ان کے میکسیکو بارڈر پر دیوار کی تعمیر کیلئے فنڈ فراہم کرنے کے اصرار کی وجہ سے موجودہ مالی سال کیلئے با قی چند محکموں کا بجٹ منظور کرلیا۔ کانگریس کو سبق سکھانے کیلئے انہوں نے اپنی حکومت کا جزوی شٹ ڈاؤن قبول کرلیا۔ اب وہ بار بار مخالف ڈ یمو کریٹک ارکان سے مطالبہ کر رہے ہیں کہ وہ اپنی چھٹیاں ترک کرکے واپس آئیں اور آکے سمجھوتہ کرکے شٹ ڈاؤن کو ختم کرائیں، جسے جمعہ کی رات سے شروع ہوئے ایک ہفتے سے زائد عرصہ گزر چکا ہے۔ اس دوران وائٹ ہاؤس کے چیف آف سٹاف جان کیلی جوگزشتہ روز سبکدوش ہوے ،جاتے جاتے کہہ دیا کہ انہوں نے جو مشاہدہ کیا ہے اس سے لگتا ہے ڈونلڈ ٹرمپ اب صدر رہنے کے اہل نہیں رہے۔ نیو یارک ٹائمز نے اپنی تازہ اشاعت میں لکھا ہے وائٹ ہاؤس میں کام کرنیوالے دو اعلیٰ سابق حکام نے بتایا ہے جان کیلی مسلسل اپنی اس را ئے کا اظہار کرتے رہے ہیں۔ جان کیلی نے لاس اینجلس ٹائمز کو بتایا ان کی کوششوں کی وجہ سے امریکہ نیٹو سے باہر نہیں نکلا جبکہ صدر ٹرمپ اس کیلئے پوری طرح تیار تھے۔ صدر ٹرمپ نے اپنے تازہ ٹویٹ پیغام میں ڈیمو کریٹس سے کہا ہے وہ اوول آفس میں بیٹھے انتظار کر رہے ہیں ۔ وہ آئیں اور آکر دیوار کیلئے فنڈ فراہم کریں، تاکہ شٹ ڈاؤن ختم ہوسکے۔

امریکہ مشکلات

مزید :

صفحہ اول -