فلاحی کام کرنے والوں کا نام ہمیشہ زندہ رہتا ہے،پروفیسر سحر انصاری

فلاحی کام کرنے والوں کا نام ہمیشہ زندہ رہتا ہے،پروفیسر سحر انصاری

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر)محبان بھوپال فورم اور کے ایم سی آفیسرز ایسوسی ایشن کے زیراہتمام ”یادیں ملاقاتیں“ کے عنوان سے مرحوم شخصیات اعجاز رحمانی، پروفیسر ہارون رشید، محترمہ ثریا شہاب،محترمہ عارفہ شمسہ کی یاد میں منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صاحبِ صدر پروفیسر سحر انصاری نے کہااگر کوئی آدمی دنیا سے رخصت بھی ہوجائے اور اگر اس نے نیک عمل کئے ہیں اور انسانیت کی فلاح و بہبود کے لئے کام کیا تو آخرت میں اس کا صلہ ملے گا ہی اور دنیا میں نیک نامی سے ساتھ اس کا نام زندہ رہیگا۔ مہمان خصوصی سینٹر سعید صدیقی نے کہا یہ وہ شخصیات ہیں جنہوں نے معاشرے میں اپنا مقام اپنے عمل اور کردار کی وجہ سے بنایا مہمان اعزازی ماضی کی مشہور فنکارہ محترمہ نیلوفر عباسی نے کہا ہم کو چاہئے کہ ہم زندہ شخصیات کے علم و فن کا اعتراف ان کی زندگی میں ہی کرلیں، معروف دانشور اور قلم کار رضوان صدیقی نے کہا اعجاز رحمانی نہ صرف عظیم شاعر اور رسول اکرم ؐ کی محبت میں والہانہ ڈوبے ہوئے انسان تھے ان کا کلام اور تحریر ایک پتھر کی مانند ہے جمعیت الفلاح کے قمر محمد خان نے کہا کہ وہ ساری زندگی ایک نظریہ کے ساتھ تھے اور مرتے دم تک اس ہی پر کاربند رہے اس موقع پر اعجاز رحمانی کے صاحب زادے ایاز رحمانی اور محسن علوی، محمود خان لئیق نے اعجاز رحمانی کی خدمات اور فن و شخصیت پر گفتگو کی پروفیسر ہارون رشید کی خدمات کا تذکرہ کرتے ہوئے پروفیسر نوشابہ صدیقی نے کہا ایک عظیم انسان اور محبت آمز شخصیت تھے۔ پروفیسر ہارون رشید کے قریبی دوست پروفیسر بدرراجا نے کہا ان کے تمام اخباری کالم علم اور تعلیمات پر مبنی ہوتے تھے، وہ اصولوں پر سمجھوتہ کرنے والے آدمی نہیں تھے۔ معروف براڈ کاسٹر محترمہ ثریا شہاب کی فن و شخصیت پر اپنے مقالے میں معروف اینکرنیوز کاسٹر اور قلم کار علی حسن ساجد نے کہامحترمہ ثریا شہاب نہ صرف پاکستان بلکہ بی بی سی لندن، ریڈیو زاہدان(ایران) کی معروف نیوز کاسٹر تھیں اور اس کے علاوہ وہ ایک شاعرہ اور فلاحی تنظیموں میں اپنا کردار ادا کرنے والی محبت امیز شخصیت تھیں۔ اس موقع پر معروف ریڈیوبراڈ کاسٹر محترمہ عارفہ شمسہ پر گفتگو کرتے ہوئے معروف نغمہ نگار مقیم امریکہ یونس ھمدم نے کہا محترمہ عارفہ شمسہ نے ریڈیو کی دنیا میں ایک نام تو کمایا ہی اور انہوں نے سماجی سرگرمیوں میں بھی بھر پور حصہ لیا۔ وہ اس دہائی کی عظیم فنکارہ تھی جنہوں نے دلوں پر حکومت کی،تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مرحومہ کی بہن نجمہ آرا نے اپنی بہن کے بارے میں اپنے تاثرات کا اظہار بھی کیا، بین القوامی شہرت یافتہ براڈ کاسٹر اور بی بی سی لندن سے وابستہ رضا علی عابدی کے تاثرات پر مبنی آڈیو پیغام بھی سا معین کو سنایا گیا۔ اس تقریب میں ان شخصیات کے اہل خانہ بڑی تعداد میں شریک تھیں۔ تلاوت قرآن پاک کی سعادت معروف سماجی شخصیت فہیم برنی نے حاصل کی جبکہ ابتدائی کلمات بانی و چیئر پرسن محبان بھوپال فورم شگفتہ فرحت ادا کئے، نظامت کے فرائض ندیم ہاشمی نے انجام دیئے جبکہ مہمانوں کا شکریہ اویس ادیب انصاری اور فرحت محسن نے مشترکہ طور پر ادا کیے۔ جبکہ خاص مہمانوں میں احتشام صدیقی (بھوپال)،کرنل اقبال محمد خان، عارف مصطفی، آفتاب عالم قریشی، شائستہ فرحت،محمد اصغر،اقبال احمد علوی، عثمان دموہی، محمد علی عارف، ڈاکٹر پرویز جمالی، وقار زیدی، پروفیسر عبدالقدیر، اشتیاق طالب، پروفیسر انیس زیدی، غلام کبریا، عبدالستار، نظر فاطمی، اعجاز جعفری،الحاج نجمی، محسن نقی، شکیل قریشی، محترمہ عابدہ، محمد شہباز،آفتاب عالم قریشی، غلام کبیریا اور شہر کی نمایاں شخصیات موجود تھیں۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...