مشکلات سے ڈرنے والے نہیں، 2020میں غربت کا مکمل خاتمہ کرینگے:چینی صدر

    مشکلات سے ڈرنے والے نہیں، 2020میں غربت کا مکمل خاتمہ کرینگے:چینی صدر

  



بیجنگ(آئی این پی) چینی صدر شی جن پھنگ نے کہا ہے کہ ہم طوفانوں اور مشکلات سے ڈرنے والے نہیں،چین مثبت طور پر پرامن ترقی کے راستے پر گامزن رہے گا، عالمی امن کا تحفظ اور مشترکہ ترقی کے فروغ کے لئے کوشش کی جائے گی،سال2020 میں غربت کا مکمل خاتمہ کیا جائے گا،ہم دوسرے ممالک کے عوام کے ساتھ ہاتھوں میں ہاتھ ڈالے "دی بیلٹ اینڈ روڈ" کی مشترکہ تعمیر اور بنی نوع انسان کے ہم نصیب سماج کی تعمیر کو آگے بڑھائیں گے اور بنی نوع انسان کے مشترکہ روشن مستقبل کے لئے جدوجہد کریں گے،ہم مشکلات کے سامنے ایک ساتھ مل کر پیچھے نہیں ہٹیں گے، اپنی خامیوں کو دور کرتے ہوئے بنیاد کو پختہ بنانے کی کوشش کریں گے،حالیہ چند مہنیوں سے ہانگ کانگ کی صورتحال باعث تشویش ہے،دلی خواہش ہے کہ ہانگ کانگ میں بہتری آئے گی، کبھی کبھار ہموار اور کبھی کبھار طوفان کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔منگل کو 2020 کی آمد پر چینی صدر شی جن پھنگ نے چائنا میڈیا گروپ اور انٹرنیٹ کے ذریعے تہنیتی پیغام میں سال نو کے لیے نیک خواہشات کا اظہارکرتے ہوئے کہاکہ 2020 کے نئے سال کی گھنٹی بج رہی ہے۔ اس موقع پر میں دارالحکومت بیجنگ میں نئے سال کی آمد پر آپ کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کرتا ہوں۔2019 میں ہم نے محنت سے کامیابیاں حاصل کی ہیں اور ٹھوس اقدامات سے ترقی کے راستے پر گامزن ہیں۔رواں برس چین کی اعلی معیار کی ترقی مستحکم طور پر جاری رہی، توقع ہے کہ جی ڈی پی کی مجموعی مالیت ایک ہزار کھرب چینی یوان تک پہنچ جائیگی یعنی فی کس جی ڈی پی کی شرح دس ہزار امریکی ڈالرز سے تجاوز کر جائیگی۔انھوں نے مزید کہاکہ فائیو جی مواصلاتی تیکنیکس کا کمرشل استعمال شروع ہو گیا ہے۔بیجنگ تا شین بین الاقوامی ہوائی اڈا با ضابطہ فعال ہو چکا ہے۔یہ کامیابیاں نئے عہد میں جدوجہد کرنے والوں کی انتھک کوششوں اور قربانیوں کا ثمر ہے جن سے چینی عوام کا ممتاز طرز عمل اور چینی طاقت کی عکاسی ہوئی ہے۔انھوں نے کہاکہ سال دو ہزار انیس کے دوران چین اپنے کھلے بازوں سے سارے عالم کا خیر مقدم کرتا ہے۔ ہم نے دوسرا "دی بیلٹ اینڈ روڈ" بین الاقوامی تعاون کا سربراہی فورم،بیجنگ عالمی باغبانی ایکسپو، ایشیائی تہذیب و تمدن کی مذاکراتی کانفرنس، چین کی دوسری بین الاقوامی درآمدی ایکسپو کا انعقاد کیا۔ جس سے پوری دنیا میں ایک مہذب، کھلے اور اشتراکی چین کی عکاسی ہوئی۔ میں نے متعدد ممالک کے رہنماوں اور حکومتی سربراہان سے ملاقاتوں کے دوران چین کے نظریات کا تبادلہ کیا۔ جس سے باہمی دوستی کو فروغ ملا اور اتفاق رائے کو گہرائی سے وسعت ملی۔

مزید : عالمی منظر /راولپنڈی صفحہ آخر


loading...