مردان میں خواجہ ہوتی کی جانب سے پانی اور صفائی بلوں میں اضافہ مسترد

  مردان میں خواجہ ہوتی کی جانب سے پانی اور صفائی بلوں میں اضافہ مسترد

  



مردان (بیورورپورٹ) پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنماا ورسابق وفاقی وزیر خواجہ محمد خان ہوتی نے ڈبلیو ایس ایس سی ایم کی طرف سے پانی اورصفائی کے بلوں کو مسترد کرتے ہوئے اس کے خلاف احتجاج کا اعلان کیاہے اورکہاہے کہ غریب مکاؤحکومت نے غریبوں پر کفر کی مہنگائی مسلط کردی ہے اب نئے انتخابات کے سوا کوئی راستہ نہیں وہ مردان کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے نوابزادہ خواجہ محمد خان ہوتی نے کہاکہ ڈبلیو ایس ایس سی ایم کو بوگس طریقے سے ایک خاندان کو نوازنے کے لئے قائم کیاگیا تھا غریبوں کے پیچھے صفائی اورپانی جیسے بنیادی سہولت کے بل بجھوا نا کسی طورپر منظور نہیں اس کے خلاف میدان میں نکل کر آوازاٹھائیں گے اور حکمرانوں کوغریب دشمن پالیسیاں واپس لینے پر مجبورکریں گے انہوں نے سیاسی صورتحال پر گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ ریاست مدینہ میں نت نرالے تجربے کئے جارہے ہیں ہواؤں کی تبدیلی کا رخ دیکھ کر نیب کے قانون کو تبدیل کردیاگیا اور ”این آراوز کی ماں“کو پیش کردیاگیا انہوں نے کہاکہ آصف زرداری اور شاہد خاقان عباسی جوانمردی کے ساتھ حکومت کی تمام سیاسی انتقام کے سامنے ڈٹے ہوئے ہیں حکومت کی معاشی پالیسیاں ناکام ہیں ایکسپورٹ کے لئے کوئی واضح حکمت عملی وضع نہیں کی الٹا امپورٹ بند کرکے زرمبادلہ کی منتقلی کے خفیہ راستے فراہم کردیئے گئے پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنمانے وزیراعظم عمران خان پر کڑی نکتہ چینی کرتے ہوئے کہاکہ ”خان اعظم“نے ایک سال میں 10ہزار ارب کا قرضہ لے کر نیا ریکارڈ قائم کیاہے نالائق حکمرانوں کی غلط پالیسیوں کے باعث ملک انارکی کی طرف جارہاہے اداروں کے آپس کا تصادم کسی بھی طورپر ملک کے مفاد میں نہیں چیف آف آرمی سٹاف کے توسیع میں حکومت سے فاش غلطیاں سرزد ہوئی ہیں جس حکومت سے ایک نوٹیفکیشن درست طریقے سے نہیں ہورہاہے وہ ملک چلانے کا کوئی حق نہیں رکھتا خواجہ محمد خان ہوتی نے کہاکہ حکومت کو عدلیہ کے وہ فیصلے قبول ہوتے ہیں جو زرداری اور نوازشریف کے خلاف ہوں جبکہ مشرف کے خلاف فیصلے پر تنقید کیاجاتاہے انہوں نے راناثناء اللہ کیس کے حوالے سے کہاکہ فیصلے میں واضح طورپر سیاسی انتقام کا ذکر کیاگیاہے کوئی شہریارآفریدی سے پوچھے کہ اس کے بعد بھی کچھ بچاہے ان حکمرانوں کو شرم آنی چاہئے خواجہ ہوتی نے فوری طورپروزیراعظم سے مستعفی ہونے اورنئے انتخابات کا مطالبہ کردیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر