نیا سال، پٹرولیم مصنوعات، ایل پی جی مہنگی، اہل کراچی کیلئے بجلی کی قیمتوں میں 4.88روپے یونٹ اضافہ

  نیا سال، پٹرولیم مصنوعات، ایل پی جی مہنگی، اہل کراچی کیلئے بجلی کی قیمتوں ...

  



اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں)حکومت نے عوام کوسال نو کا تحفہ دے دیا۔پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کردیاگیا۔ جس کے تحت پیٹرول کی قیمت میں 2 روپے 61 پیسے فی لیٹر اضافہ کیا گیا ہے۔ ڈیزل کی قیمت میں 2 روپے25 پیسے فی لیٹر، مٹی کے تیل کی قیمت میں 3روپے 10 پیسے، لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت میں 2 روپے8 پیسے فی لیٹر اضافہ کیا گیا ہے۔ذرائع کے مطابق پیٹرول کی نئی قیمت 116 روپے 60 پیسے فی لیٹر مقرر کی گئی ہے جبکہ ڈیزل کی نئی قیمت 127 روپے 26 پیسے، مٹی کے تیل کی نئی قیمت 99 روپے45 پیسے  اور لائٹ ڈیزل آئل کی نئی قیمت 84 روپے 51 پیسے فی لیٹر مقرر کردی گئی ہے۔اوگرا نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کی سمری پیٹرولیم ڈویڑن کو بھجوائی تھی۔پیٹرول کی قیمت میں فی لیٹر 2 روپے 61 پیسے اضافے کی سفارش جب کہ ڈیزل کی قیمت میں فی لیٹر 2 روپے 25 پیسے اضافے کی سفارش کی گئی تھی۔اوگرا نے پیٹرول کی نئی قیمت 116 روپے 60 پیسے فی لیٹر جب کہ ڈیزل کی نئی قیمت 127 روپے 26 پیسے فی لیٹر مقرر کرنے کی سفارش کی تھی۔اوگرا نے مٹی کے تیل کی نئی قیمت 99 روپے 45 پیسے فی لیٹر مقرر کرنے کی سفارش کی جب کہ لائٹ ڈیزل آئل کی نئی قیمت 84 روپے 51 پیسے فی لیٹر مقرر کرنے کی سفارش کی گئی تھی۔دوسری طرف نن نیپرا نے کے الیکٹرک کی سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کی مد میں بجلی کی قیمت میں اضافہ کردیا۔ تفصیلات کے مطابق کراچی کے صارفین کیلئے بجلی کے ایک یونٹ کی قیمت میں 4روپے 88پیسے فی یونٹ اضافہ کردیا گیا،نیپرا کی جانب سے 11 سہ ماہیوں کی ایڈجسٹمنٹس کا فیصلہ دیا گیا ہے،نیپرا کے فیصلہ کے مطابق کراچی کے صارفین کیلئے بجلی کا ایک یونٹ 12 روپے 82 پیسے سے بڑھا کر 17 روپے 69 پیسے فی یونٹ مقرر کر دیا،کراچی کے صارفین کو آئندہ مہینوں میں 106ارب روپے اضافی ادا کرنے پڑینگے، نیپرا نے کے الیکڑک کی بجلی مہنگی کرنے کی درخواست کی وجوہات بھی بتادیں،کے الیکٹرک نے بجلی بنانے کیلئے 24ارب روپے کی قدرتی درآمدی مائع گیس استعمال کی،گیس کی ریفرنس پرائس 400سو ایم ایم بی ٹی یو سے بڑھ کر 629روپے فی ایم ایم بی ٹی یو ہونے کا بھی اثر پڑا،فرنس آئل کا نرخ بھی 27ہزار میٹرک ٹن سے بڑھ کر 70ہزار روپے فی میٹرک ہونے کا بھی اثر پڑا۔نیپرا کے مطابق آپریشنل اور مینٹیننس کی لاگت بڑھنے کا بھی اثر پڑا، ڈالر کی قیمت بڑھنا بھی کراچی کے صارفین کیلئے بجلی کی قیمت بڑھنے کا ایک سبب بنا۔دریں اثنااوگرا نے ایل پی جی کی قیمت میں 25 روپے فی کلو اور گھریلو سلنڈر کی قیمت میں 277 روپے کا اضافہ کردیا۔ایکسپریس نیوز کے مطابق بجلی اور پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کے بعد حکومت نے ایل پی جی کی قیمتوں میں بھی اضافہ کر دیا، اوگرا نے جنوری 2020ء  کے لیے ایل پی جی کی قیمت میں اضافے  کا نوٹی فکیشن جاری کر دیا جس کے مطابق ایل پی جی کی فی کلو قیمت میں  25 روپے اضافہ کردیا گیا ہے۔نوٹی فکیشن کے مطابق  ایل پی جی کی قیمت میں 25 روپے فی کلو اور گھریلو سلنڈر میں 277 روپے اضافہ کیا گیا ہے، ایل پی جی کی پیداواری قیمت میں بھی20 ہزار 121 روپے اضافہ کیا گیا ہے۔ پیداواری قیمت اضافے کے بعد 69 ہزار  971 سے بڑھ کر اب 90 ہزار 93 روپے ہوگئی ہے۔چیئرمین ایل پی جی ڈسٹری بیوٹرز ایسوسی ایشن عرفان کھوکھر کا کہنا ہے کہ گلگت اور اسکردو میں ایل پی جی گھریلو سلنڈرکی قیمت 2150 اور فی کلو 200 روپے میں دستیاب ہوگی، جب کہ کھلی ایل پی جی گیس اب 129 روپے فی کلو سے بڑھ کر 155 روپے فی کلو اور گھریلو سلنڈر 1513 روپے کی جگہ 1791 روپے ہوگیا ہے۔

پٹرولیم /بجلی

مزید : صفحہ اول


loading...