منشیات کے خاتمے کیلئے ہر سطح پر کوشش کرنا ہو گی: صدر مملکت

منشیات کے خاتمے کیلئے ہر سطح پر کوشش کرنا ہو گی: صدر مملکت

  



کراچی (آئی این پی)صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا ہے کہ افغانستان میں 10ہزار ٹن سالانہ افیون کی پیداوار ہو رہی ہے، منشیات کے خاتمہ کیلئے ہر سطح پر کوشش کرنا ہوگی، منشیات کی نئی اقسام نوجوان نسل کو تیزی سے اپنے شکنجے میں جکڑ رہی ہے، والدین کو اپنے بچوں پر خصوصی نگاہ رکھنے کی ضرورت ہے،علماء کرام معاشرے کی سماجی معاملات پر بھی رہنمائی کریں۔منگل کو منشیات نذر آتش کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہاکہ منشیات کا استعمال صرف افراد کو ہی نہیں بلکہ خاندان کو بھی تباہ کر دیتاہے، اور منشیات پر قابو پانے کیلئے اس کی سپلائی کو روکنا ضروری ہے۔انہوں نے کہا کہ امریکا انسداد منشیات مہم پر اربوں ڈالر خرچ کرتا ہے اور دنیا میں 90فیصد منشیات افغانستان میں پیدا ہو رہی ہے، افغانستان میں 10ہزار ٹن سالانہ افیون کی پیداوار ہو رہی ہے۔ صدر مملکت نے کہا کہ امن و امان کی خراب صورتحال کے دوران کراچی میں منشیات کا کاروبار بڑھا ہے، انسداد منشیات روکنے کیلئے ہر سطح پر کوشش کرنا ہوگی، منشیات سے بچنے کیلئے نوجوان نسل کو صحتمند سرگرمیوں کی طرف مائل کرنا ہوگا، منشیات کی نئی اقسام نوجوان نسل کو تیزی سے اپنے شکنجے میں جکڑ رہی ہے، والدین کو اپنے بچوں پر خصوصی نگاہ رکھنے کی ضرورت ہے، جو معاشرے اپنی اخلاقی اقدار کی بنیاد پیسے پر رکھتے ہیں وہ تباہ ہو جاتے ہیں۔صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ پاکستان اقوام کی برادری میں نمایاں مقام حاصل کرنے کیلئے بالکل تیار ہے، قائداعظم کا کمال تھا کہ انہوں نے نظریے کی بنیاد پر قوم کو اکٹھا کیا، علماء کرام معاشرے کی سماجی معاملات پر بھی رہنمائی کریں، سماجی امور میں اداروں کے ساتھ مساجد کا بھی کردار ہونا چاہیے۔

صدر مملکت

مزید : صفحہ اول