2019 کے دوران وہ آدمی جس کے اثاثے 14 ارب ڈالر کم ہوگئے، مگر کیوں ؟ وجہ ایسی کہ آپ بھی داد دیں گے

2019 کے دوران وہ آدمی جس کے اثاثے 14 ارب ڈالر کم ہوگئے، مگر کیوں ؟ وجہ ایسی کہ آپ ...
2019 کے دوران وہ آدمی جس کے اثاثے 14 ارب ڈالر کم ہوگئے، مگر کیوں ؟ وجہ ایسی کہ آپ بھی داد دیں گے

  



نیو یارک (ڈیلی پاکستان آن لائن) سال 2019 کے دوران بہت سے ار ب پتی افراد نے دونوں ہاتھوں سے نفع کمایا لیکن بہت کم افراد ہی ایسے تھے جنہوں نے دونوں ہاتھوں سے اپنی دولت کو غریبوں میں تقسیم کیا۔ ان افراد میں سر فہرست انڈیا سے تعلق رکھنے والے عظیم پریم جی ہیں جن کے اثاثوں میں گزشتہ سال 14 ارب 10 کروڑ ڈالر کی کمی واقع ہوئی۔

ارب پتی افراد کی دولت پر نظر رکھنے والے ادارے فوربز کے مطابق عظیم پریم جی نے سال 2019 میں 7 ارب 60 کروڑ ڈالر کی رقم عظیم پریم جی فاﺅنڈیشن کو عطیہ کی جو کہ تعلیم کے شعبے میں کام کرتی ہے۔ مجموعی طور پر گزشتہ برس عظیم پریم جی کے اثاثوں میں 14.1 ارب ڈالر کی کمی آئی ، اس وقت ان کے اثاثوں کی مالیت 7 ارب 20 کروڑ ڈالر ہے اور وہ دنیا کے 263 ویں اور انڈیا کے 17 ویں امیر ترین شخص ہیں۔

2019 کے دوران ایمازون کے بانی جیف بیزوس کو 13 ارب 10 کروڑ ڈالر کا نقصان اٹھانا پڑا، اس کی بڑی وجہ ان کی اپنی اہلیہ سے ہونے والی مہنگی ترین طلاق تھی۔ خیال رہے کہ جیف بیزوس ویسے تو دنیا کے امیر ترین شخص ہیں لیکن فلاحی کاموں میں وہ نہ ہونے کے برابر حصہ ڈالتے ہیں ، اپنے ملازمین کو بھی وہ بہت کم تنخواہ دیتے ہیں جس کی وجہ سے انہیں تنقید کا سامنا بھی کرنا پڑتا ہے۔

سال 2019 کے دوران انڈیا کے رکن پارلیمان سبھاش چندرا بھی ان لوگوں میں شامل ہیں جنہیں سب سے زیادہ نقصان اٹھانا پڑا، انہیں ایک سال کے 3 ارب 40 کروڑ ڈالر کا نقصان ہوا ۔ امریکہ سے تعلق رکھنے والے ٹراوس کلانک کو گزشتہ برس 3.1 ارب اور چینی ٹائیکون یان ژی کو 3 ارب ڈالر کا نقصان ہوا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /بزنس