ساکا آخری روز، سٹاک مارکیٹ میں معمولی تیزی، انڈیکس 60.62پوائنٹس بڑھ گیا: ڈالر 26پیسے سستا، سونا 350روپے تولہ مہنگا 

  ساکا آخری روز، سٹاک مارکیٹ میں معمولی تیزی، انڈیکس 60.62پوائنٹس بڑھ گیا: ...

  

کراچی (اکنامک رپورٹر)پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں سال 2020کے آخری کاروبار ی سیشن کے دوران تیزی کا رجحان غالب رہا اورکے ایس ای100انڈیکس60.62پوائنٹس کے اضافے سے 43755.38پوائنٹس کی سطح پرپہنچ گیا جبکہ 49.64 فیصد کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس کے نتیجے میں مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت 14ارب95کروڑ90لاکھ روپے بڑھ گئی اور حصص کی لین دین کے لحاظ سے کاروباری حجم بھی بدھ کی نسبت 26.81فیصد زائد رہا۔گزشتہ روز ٹریڈنگ کا آغاز مثبت زون میں ہوااورسیمنٹ،آئل اینڈ گیساور بینکنگ شعبے میں حصص خریداری کے باعث تیزی رہی جس کے نتیجے میں کے ایس ای100انڈیکس 43891پوائنٹس کی بلند سطح پر پہنچ گیابعد ازاں پرافٹ ٹیکنگ رجحان کے باعث 43800اور43900کی نفسیاتی حدیں برقرار نہ رہ سکی لیکن تیزی کا رجحان غالب رہا اور کاروبار کے اختتام پر کے ایس ای100انڈیکس60.62پوائنٹس کے اضافے سے 43755.38 پر بند ہوا۔اسی طرح کے ایس ای30انڈیکس 40.27پوائنٹس کے اضافے سے18180پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس45.81پوائنٹس کے اضافے سے30779.70پوائنٹس کی سطح پر پہنچ گیا۔گزشتہ روز مجموعی طور پر417کمپنیوں کے حصص کاکاروبار ہوا جن میں 207کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ 193میں کمی اور17میں استحکام رہا۔تیزی کے باعث مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت 80 کھرب 20 ارب 40 کروڑ 44 لاکھ روپے سے بڑھ کر 80 کھرب 35 ارب 36 کروڑ 34 لاکھ روپے ہوگئی۔حصص کی قیمتوں میں نمایاں اتار چڑھاوٗ کے لحاظ سے یونی لیور فوڈز کے حصص کی قیمت 500روپے کے اضافے سے14ہزارروپے اورمری بریوری 25.64روپے کے اضافے سے 627.42 روپے ہوگئی جب کہ نیسلے پاکستان 179.99 روپے کی کمی سے6665.01روپے اورپریمیئر شوگر33روپے کی کمی سے446 روپے ہوگئی ا۔مقامی کرنسی مارکیٹوں میں جمعرات کو امریکی ڈالر کے مقابلے میں پاکستانی روپے کی قدر مزید مضبوط ہوگئی اور انٹر بینک میں ڈالر 26پیسے کی کمی سے160.05روپے جب کہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں 30پیسے کی کمی سے160.10روپے کی سطح پر آگیا۔فوریکس ایسوسی ایشن کے مطابق گزشتہ روز انٹر بینک میں امریکی ڈالر کی قیمت خرید 26 پیسے کی کمی سے160.21روپے سے گھٹ کر 159.95روپے اور قیمت فروخت160.29روپے سے گھٹ کر 160.05 روپے ہوگئی جب کہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں امریکی ڈالر کی قیمت خرید30پیسے کی کمی سے160.10روپے سے گھٹ کر159.80روپے اور قیمت فروخت160.40روپے سے گھٹ کر 160.10 روپے ہوگئی۔دیگر کرنسیوں میں یورو کی قیمت خرید50پیسے کی کمی سے 194روپے سے گھٹ کر193.50روپے اور قیمت فروخت196روپے سے گھٹ کر195.50روپے ہوگئی جب کہ برطانوی پاونڈٖ کی قیمت خرید 50پیسے کے اضافے سے215روپے سے بڑھ کر215.50روپے اور قیمت فروخت217روپے سے بڑھ کر217.50روپے ہوگئی۔مقامی صرافہ مارکیٹوں میں سونا جمعرات کو مزید 350روپے کے اضافے سے ایک لاکھ14ہزارروپے کی سطح پرپہنچ گیا جب کہ مجموعی طور پر گزشتہ سال 2020 میں سونے کی فی تولہ قیمت میں 25 ہزار 600 روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔ صراف اینڈ جیولر ز ایسوسی ایشن کے مطابق گزشتہ روز عالمی گولڈ مارکیٹ میں سونے کی فی اونس قیمت14ڈالر کے اضافے سے1894ڈالرہوگئی جس کے زیر اثر مقامی مارکیٹوں میں سونے کی قیمت میں اضافے کا رجحان برقراررہا او ر ایک تولہ سونے کی قیمت 350روپے کے اضافے سے1لاکھ 14ہزارروپے جب کہ دس گرام سونے کی قیمت 301روپے کے اضافے سے97737روپے ہوگئی۔چاندی کی فی تولہ قیمت بغیر کسی تبدیلی کے 1320روپے مستحکم رہی۔درایں اثنا گزشتہ سال 2020میں مجموعی طور پر عالمی گولڈ مارکیٹ میں فی اونس سونے کی قیمت میں 372ڈالر یعنی24فی صد اضافہ ہوا ہے31دسمبر2019کو عالمی مارکیٹ میں سونے کی فی اونس قیمت1522ڈالر تھی جو بڑھ کر 31دسمبر2020کو 1894ڈالر پر پہنچ گئی ہے جس کے زیر اثر مقامی صرافہ مارکیٹوں میں فی تولہ سونے کی قیمت میں ایک سال میں 25ہزار600روپے یعنی 29فیصد کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے31دسمبر2019کو فی تولہ سونے کی قیمت 88ہزار400روپے تھی جو ایک سال بعد ایک لاکھ 14ہزار روپے کی سطح پر پہنچ گئی ہے اسی  طرح  دس گرام سونے کی قیمت بھی ایک سال میں 21947روپے بڑھ گئی ہے۔ 

سٹاک مارکیٹ

مزید :

پشاورصفحہ آخر -