کے الیکٹرک نے کورنگی اور ناظم آباد میں کنڈا نیٹ ورک کا خاتمہ کر دیا

        کے الیکٹرک نے کورنگی اور ناظم آباد میں کنڈا نیٹ ورک کا خاتمہ کر دیا

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)کے الیکٹرک کی جانب سے شہر بھرمیں غیر قانونی کنڈا کنکشنوں کے خلاف مہم جاری ہے۔کورنگی میں واقع کے ڈی اے ایمپلائز سوسائٹی سے کے الیکٹرک نے کامیابی سے 2,000 سے زائد غیرقانونی کنڈوں کا صفایا کر دیا۔ اِس کے علاوہ، ناظم آباد کے علاقے جلال آباد میں غیر قانونی انڈرگراؤنڈ نیٹ ورک کا خاتمہ کر دیا گیا جسے پانی کی بورنگ کے لیے استعمال کیا جارہا تھا۔اس مہم کے دوران مقامی کنڈا مافیا کی جانب سے مزاحمت کے باوجود 1,700 کلوگرام سے زائدوزنی کنڈوں کا خاتمہ کیا گیا۔ یہ کنڈے، کورنگی کے انڈسٹریل ایریا میں ایرئیل بنڈلڈ کیبلز پرلگائے گئے تھے جو اردگردکے علاقوں کے لیے خطرے کا باعث بنے ہوئے تھے۔ناظم آبادکے علاقے جلال آباد میں کارروائی کے دوران،کے الیکٹر ک کی ٹیموں نے232 کلو وزنی،غیرقانونی انڈرگراؤنڈاور اوورہیڈ کیبلزکا خاتمہ کرنے کے علاوہ ناجائز طور پر نصب بجلی کے آلات بھی قبضے میں لے لیے۔اس نیٹ ورک کے ذریعے، علاقے میں تقریباً 62kW کا الیکٹریکل لوڈ، پانی کی غیر قانونی بورنگ کے لیے استعمال ہو رہا تھا۔اس غیرقانونی کام میں ملوث افراد کو نوٹس جاری کیے جاچکے ہیں۔کے الیکٹرک کے ترجمان کے مطابق، ”پاور انفرااسٹرکچر کے اطراف غیر قانونی کنکشنز اور تجاوزات عوام کے لیے خطرے کا باعث  ہیں اور ہم اس مسئلے کو کافی عرصے سے اُجاگر کر رہے ہیں۔اِس سلسلے میں پیشرفت کرتے ہوئے ہم نے بجلی کی چوری کے خلاف بھی اپنی کوششوں میں مزید اضافہ اضافہ کریں گے۔ادارے نے،پاور انفرااسٹرکچر کے اطراف موجودتجاوزات کی نشاندہی بھی کی ہے اور فوری کارروائی کے لیے متعلقہ حکام کو آگاہ کردیا ہے۔“کے الیکٹرک بجلی چوری کے خاتمے کے لیے شہریوں سے بھرپور تعاون کی درخواست کرتا ہے۔ بجلی چوری کیخلاف شکایات درج کروانے کے لئے 118 پر کال کرسکتے ہیں یا کے الیکٹرک کے سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پربذریعہ میسج یاKE Live موبائل ایپ کے ذریعے رابطہ کرسکتے ہیں۔

مزید :

صفحہ آخر -