شوبز انڈسٹری کا ناقابل تلافی نقصان کر کے 2020ء الوداع

      شوبز انڈسٹری کا ناقابل تلافی نقصان کر کے 2020ء الوداع

  

 (رپورٹ،حسن عباس زیدی)سال 2020ء بہت ساری تلخ اور خوبصورت یادیں چھوڑ کر الوداع ہو گیا۔ عالمی وبا ء کورونا کی وجہ سے دنیا بھر کی طرح پاکستان کیلئے بھی 2020 انتہائی تباہ کن ثابت ہوا جس نے تمام شعبوں کی طرح شوبز انڈسٹری کو بھی ناقابل تلافی نقصان پہنچا یا،اگرچہ اس سال میں شوبز انڈسٹری کے لوگوں کوزیادہ خوشیاں اور ترقی نہیں ملی اس کے باو جود کئی حوالوں سے یہ سال ہمیشہ کیلئے یاد گار بن گیا کیونکہ کئی فنکاروں نے زندگی کے نئے سفر کا آغاز کیا جس میں زیادہ تر نے لو میرج ہی کی۔2020ء نے غم بھی بہت دیئے کیونکہ شوبز کی کئی اہم شخصیا ت ہم سے ہمیشہ کیلئے بچھڑ گئیں،اسی طرح کسی کے گھر نئے مہمانوں کی آمد ہوئی تو کہیں رشتوں کا اختتام طلاق اور خلع کی صورت میں ہوا۔سب سے زیادہ فلم انڈسٹری متاثرہوئی اور کوئی بھی فلم نمائش کیلئے پیش نہ کی جا سکی۔2020 کے آغاز میں چھوٹے بجٹ کی نان کمرشل دو تین فلمیں ضرور ریلیز کی گئیں جو زیادہ کامیابی حاصل نہ کر سکیں۔کورونا کی وجہ سے لاک ڈاؤن لگایا گیا تو سنیما گھر، تھیڑزبند، شوٹنگز رک گئیں۔سال کے آخر میں سنیماگھر کھلنے کے باوجود کوئی بھی پاکستانی فلم نمائش کیلئے پیش نہ کی گئی حالانکہ ”دی لیجنڈ آف مولا جٹ“ اور”ٹچ بٹن“ جیسی فلموں کی نمائش کا اعلان پہلے ہی کیا جاچکا تھا۔اس کے علاوہ پندرہ کے قریب مزید فلمیں تیار تھیں لیکن کسی بھی پروڈیوسرنے اپنی فلم ریلیز کر نے کا رسک نہیں لیا۔ تھیٹر انڈسٹری بھی مشکلات کا شکار رہی اور انڈسٹری سے وابستہ ہزاروں افراد متاثر ہوئے۔میوزک شوز اور کنسرٹس پر پابندی کے باعث گلوکار،میوزیشنز اور دیگر لوگ بھی پریشانی میں مبتلا رہے۔ فیشن انڈسٹری کا بھی یہی حال رہا،تمام فیشن ویک ملتوی کردیئے گئے۔2020 میں جن شوبز ستاروں نے زندگی کے نئے سفر کا آغاز کیا ان میں  ماڈل ایمان سلمان،گلوکارہ ریچل وکاجی،ٹی وی اداکار سعد قریشی،اداکارہ ارمینا خان،اداکارہ سعدیہ غفار، سجل علی اور احدرضا میر،اداکارہ نمرہ خان، آغا علی اور حنا الطاف،اداکا ر د انیال راحیل اور فریال محمود،صدف کنول اور شہروزسبزواری،اداکارہ آمنہ شیخ، گلوکارہارون،اداکار صائم علی،سارہ خان، گلوکار فلک شبیر،اداکارہ زہرہ علی،اداکار سلمان سعید،اداکارہ حباعلی،ثنا جاوید اور عمیرجسوال،رباب ہاشم،آمنہ الیاس اور داور محمود، اور بشریٰ انصاری کی بیٹی میراانصاری کی دوسری شادی شامل ہیں۔ لاک ڈاؤن کے دوران ہوئی وہ تھی سینئر اداکارہ ثمینہ احمد اور منظر صہبائی کی جنہوں نے سترسال کی عمر میں شادی کرکے نہ صرف سب کو حیران کردیا بلکہ ایک نیا رجحان بھی متعارف کرایا۔اداکارہ صنم بلوچ نے نہ صرف شادی بلکہ بیٹی کی پیدائش کی اطلاع دے کر سب کو حیران کردیا کیونکہ عبداللہ فرحت اللہ سے طلاق کے بعد وہ منظر سے غائب تھیں۔2020 میں بچھڑنے والوں میں ڈرامہ سیریل ”تنہائیاں“ کے اہم کردار عامر حاتمی،اطہرشاہ خان جیدی،اداکارہ نگہت بٹ،گلوکارہ مہہ جبیں قزلباش،سٹیج اداکارہ روپ چوہدری،ڈھولک نواز استاد کرم حسین،طبلہ نواز سلامت علی خان،گلوکارفرید نواز سانول،گلوکار اعجازقیصر،اداکارفر خ شاہ،سینئراداکارصغیر الٰہی،ماڈل واداکارہ فجر علی،اداکارہ وہ گلوکارہ ہیرسنگھار،ندیم برال،امان اللہ،اداکار ریحا ن، سینئرکیمرامین آفتاب پپو،عبدالقادر جونیجو،کلاسیکل گلوکاراستاد رفیق حسین، ماڈل زارا عابد،اداکار وپروڈیوسر اسد بخاری، مدثرحسین قاسمی،سٹیج ڈائریکٹر تنویرعالم،گلوکار استاد کرشن لعل بھیل،کیمرامین علی جان،اداکارہ اختر شیرانی،پی ٹی وی کی مقبول سیریز ”گیسٹ ہاؤس“ کے مراد طارق ملک،نوجوان نغمہ نگارشکیل سہیل،اداکارہ صبیحہ خانم،کوریوگرافر استاد عمر دراز،  ملک کے مقبول ترین میزبان طارق عزیز،گلوکار شفاعت اللہ روکھڑی،مرزاشاہی،لطیف منا،شاہدنذیرخان،سینئر اداکار فرخ شاہ،ڈائریکٹراقبال کاشمیری،صنم نازی اور پاکستان فلم انڈسٹری کی ہیر فردوس بیگم شامل ہیں۔اسی سال 2020میں طلاق اور خلع لینے والی اداکاراوں میں سائرہ یوسف  انجمن، فرح حسین،گلوکارہ صنم ماروی،گلوکارہ فرح انور، آفر ین خان، ڈیزائنرماہین غنی،اداکارہ ربعیہ چوہدری،عروہ حسین شامل ہیں۔جن فنکاروں کے گھر نئے مہمانوں کی آمد ہو ئی ان میں بونیتاڈیوڈ،انعم فیاض،،ایرج فاطمہ،حمزہ علی عباسی،،جگن کاظم،صنم چوہدری،انعم ملک،اداکارہ مومل شیخ اورفیصل قریشی شامل ہیں۔2020میں فنکاروں کے درمیان بہت سے تنازعات بھی سامنے آئے جن میں گلوکار علی ظفراور علی عظمت کے درمیان پی ایس ایل کے گانے کا تنازع،معروف ماڈل عظمیٰ خان اور ہما خان کا ملک ریاض کے قریبی رشتہ دار کیساتھ سکینڈل،اداکارہ عائشہ ثنا کاکروڑوں روپے کا فراڈ کیس،اداکارہ وینا ملک اور ان کے سابقہ شوہراسدبشیر کے درمیان سوشل میڈیا پر الزام تراشی کا سلسلہ،اداکارہ میرا کو کوریوگرافرشوکت علی لاڈا کی طرف سے امدادی رقم میں خورد برد کے الزام،خلیل الرحمن قمر اور ماروی سرمد کے درمیان جھگڑا،گلوکار علی ظفر اور میشا شفیع کا تنازع،صباقمرا ور بلا ل سعید کو لاہور کی تاریخی مسجدمیں گانے کی شوتنگ کا مقدمہ،اداکارہ سلمیٰ ظفراور شیری شاہ کی طرف سعود اور جویریہ ڈراموں کا معاوضہ ادا نہ کرنے کا تنازع،سٹیج اداکارہ اقرا خان پر قاتلانہ حملہ،مہوش حیات کے کمرشل میں ڈانس کا ایشوزشامل ہیں۔اگر ٹی وی ڈراموں کی بات کی جائے تو پی ٹی وی سے نشر ہونیوالہ ترک سیریل”ارطغرل غازی“ نے پاکستان میں مقبولیت کے نئے ریکارڈ بنائے جبکہ اے آروائی سے نشر ہونیوالی سیریل”جلن“ کو بھی بہت زیادہ پسند کیا گیا۔ اس ڈرامے پر دوبار پابندی بھی عائد کی گئی۔

رپورٹ حسن زیدی

مزید :

صفحہ اول -