پولیس اہلکاروں کی بہن بھائی کے ساتھ مبینہ توہین آمیز سلوک کی ویڈیو ، دراصل کیا ہوا تھا ؟ پولیس نے حیران کن موقف جاری کر دیا 

پولیس اہلکاروں کی بہن بھائی کے ساتھ مبینہ توہین آمیز سلوک کی ویڈیو ، دراصل ...
پولیس اہلکاروں کی بہن بھائی کے ساتھ مبینہ توہین آمیز سلوک کی ویڈیو ، دراصل کیا ہوا تھا ؟ پولیس نے حیران کن موقف جاری کر دیا 

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن ) ترجمان ماڈل ٹاو ن پولیس کا کہنا ہے کہ تھانہ غالب مارکیٹ کی حدود میں بہن بھائی سے توہین آمیز سلوک کا الزام بے بنیاد ہے۔

ترجمان کے مطابق گزشتہ ماہ ضلعی انتظامیہ نے غیر اخلاقی سرگرمیوں پر نجی ہوٹل کو سیل کیا تھا، ملزم وسیم بھٹی نے خود ہوٹل کھول کر غیر اخلاقی سرگرمیاں دوبارہ شروع کر دی تھیں، ملزم ریکارڈ یافتہ ہے اور متعدد مقدمات میں ملوث ہے۔ترجمان کے مطابق غالب مارکیٹ پولیس نے گزشتہ روز ملزم کے خلاف کار سرکار میں مزاحمت سمیت مختلف دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا تھا۔ملزم کے ایما پر پارکنگ میں پولیس کی خالی گاڑی کے سامنے ویڈیو بنا کر پولیس کو بدنام کرنے کی سازش کی گئی ہے۔

ڈی آئی جی آپریشنز اشفاق خان کا کہنا ہے کہ اس معاملے کی انکوائری مکمل کر لی ہے، سارا معاملہ خود ساختہ ہے، پولیس نے کسی لڑکے اور لڑکی کو نہ تو چیک کیا اور نہ ہی اٹھک بیٹھک کرائی۔یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ  ویڈیو میں متاثرہ نوجوان نے بتایا تھا کہ وہ دونوں فیکٹری میں کام کرتے ہیں ، انہیں گھر جاتے ہوئے پولیس نے روک کر بدسلوکی کی۔ نوجوان نے الزام لگایا کہ چوکی انچارج نے اس کی بہن کی خود تلاشی لی۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -